بنوریہ ٹاون کے مہتمم اعلی کی شرمناک زندگی

AhmadSaleem264

Senator (1k+ posts)
Where is state ?? why dont state do its duty and arrest him. Incidents after Incidents and state is silent.
These people are above state. They possess more power than the state. Most Pakistanis are illiterate and religiously extremist. They will kill or get killed when it's anything remotely related to these molvis or religious dialogue. No one can touch them
 

IMIKasbati

MPA (400+ posts)
By mixing fact and fiction , all you are doing is following some agenda, knowingly or unknowingly.why nothing is said about fazlu , even though it’s his madrasa whose stories are revolving around!! I am not saying others are not involved! We all know most / many of these people are involved in heinous crimes! We must not direct criticism toward a certain sect or some how Tahir ashrafi, because this seems more like political point scoring, this fizzles out the reaction people need to have against these madrasa
You are spot on. The rawafid started this thread coz the thread about irani schools was being discussed.

No matter which sect, but whatever that old mullahs did, he must be penalized and he must be made a lesson for others.

But using that incident to target a sect is typical rafdi / Zionist method.
 

AhmadSaleem264

Senator (1k+ posts)
The state will sleep unless the public demand action..... I have this guy on permanent ignore but I have no shame in admitting that he is very much right in this case.... where did our sense of right and wrong go? Where is the Islam in us sleeping?
State ignores them because they are stronger than the state. They can start a war anytime and bring an end to the existence of state. These goons have the support of the majority.
 

چھومنتر

Minister (2k+ posts)
ایک ویڈیو گردش کررہی ہے جس میں دیکھا جاسکتا ہے کہ بنوریہ ٹاون کے مہتمم اعلی جس کی عمر کم از کم ستر سال ہوگی ایک طالبعلم سے بدفعلی کا ارتکاب کررہا ہے۔ اسی طرح ایک سابقہ ویڈیو میں ایک اور ستر پچھتر سالہ مہتمم ایک دس سالہ بچے سے اورل سیکس میں مصروف ہے مفتی اعلی نے اپنا عضو تناسل ٹوپی پہنے ہوے بچے کے منہ میں دے رکھا ہے اور اسے چوسنے پر مجبور کررہے ہیں، بنوریہ ٹاون کا یہ مہتمم مولوی جب جوان تھا تو اس نے کیا کیا شیطانی کام کئے ہونگے اس کا تصور کرنے سے بھی گھن آتی ہے
یہ حال سب سے بڑے مہتمم کا ہے اس کے نیچے جو نوجوان اساتذہ مولوی اور دیگر عملہ ہے ان کا کیا حال ہوگا وہ تصور سے باہر ہے۔ مدرسے کے قریب ایک ڈاکٹر جو مالی مفادات کے پیش نظر منہ نہیں کھولتا کیونکہ اس مدرسے کے تمام مریض اسی نے دیکھنے ہوتے ہیں کے مطابق بچوں کے مقعد زیادتی کے باعث پھٹ جاتے ہیں اور بلیڈنگ کی وجہ سے ان کی حالت غیر ہوتی ہے کئی بار اس نے بچوں کو کہا کہ وہاں سے چلے جائیں اور اپنے والدین کو اطلاع کریں کئی ایک نے ایسا کیا اور وہاں سے چلے بھی گئے مگر بہت سارے ڈر کی وجہ سے چپ ہوجاتے ہیں جس کی وجہ سے یہ شیطانی کام مدارس کے اندر جاری و ساری ہے عموما جو بچے مدارس کے اندر قیام پزیر ہوتے ہیں ان کی راتیں بہت تکلیف دہ گزرتی ہیں
قارعین یہ مت سمجھیں کہ مجھےمولویوں سے کوی پرخاش ہے۔ میں جو بھی کہتا ہوں حقائق پر ہوتا ہے۔ مولوی سمیع الحق کی مشکوک انداز میں موت بھی اسی وجہ سے ہوی تھی۔ مولوی سمعیع الحق کے ساتھ ایک اٹھارہ سال کا لونڈا ٹھہرا ہوا تھا جو مولوی کو کھانا پینا اور مساج بھی کرتا تھا جب مولوی کی لاش ملی تو وہ ینگ نوجوان غائب تھا اور پولیس کو دوبارہ اس تک رسای خود مولوی سمیع الحق کے بیٹوں نے نہیں ہونے دی اور پی ٹی آی کے سابق وزیراعلی پرویز خٹک جو اکوڑہ خٹک سے گہرے روابط رکھتا ہے کو کہلا کر یہ کیس دبا دیا گیا، مولوی سمیع الحق کو بہت اناڑی طریقے سے چھریاں ماری گئی تھیں جو کسی تجربہ کار قاتل کا کام نہیں ہوسکتا ویسے بھی پستول اور گنیں بھی دستیاب ہیں مگر کچن کی چھری کا استعمال بہت کچھ بتا رہا تھا
ان واقعات سے ملک کی بدنانی ہورہی ہے دیوبندی مدارس کا اس میں بہت بڑا کردار ہے جنکے بانی کے حجرے کے بارے میں بھی ایسی ہی باتیں مشہور تھیں
حکومت فی الفور ان مدارس کو بند کردے اور اگر یہ شور شرابا کریں تو فوج کے تھرو ان کو کنٹرول کیا جاے
حکومت فوری طور پر انڈین ایجنٹ دیوبندی مولوی طاہر اشرفی کو برخواست کرکے اس کے خلاف کاروای کرے کیونکہ وہ بھی ایک بدکردار مولوی ہے جو شرابی بھی ہے ۔ اور شراب کے نشے میں گرفتار بھی ہوچکا ہے۔ کئی بار ٹی وی پر شراب کے نشے میں دھت بات کرتا رہا ہے ۔یہ انڈیا سے بھی خفیہ رابطے رکھتا ہے، اس کے مدرسوں میں بھی یہی شیطانی دھندہ کھلم کھلا کیا جارہا ہے

آپ کو اس الف لیلا کی کہانی میں سب کچھ مل جائے گا اگر نہیں ملنا تو مریم نانی کا نام نہیں ملنا جو آج کل جس مدرسے میں یہ گھناؤنا فعل ہوا اس کے کرتا دھرتا ڈیزل کی جھولی کے مزے کے رہی ہے

🤣
 

Iconoclast

Chief Minister (5k+ posts)
State ignores them because they are stronger than the state. They can start a war anytime and bring an end to the existence of state. These goons have the support of the majority.
I don't agree, no matter how strong you are, once you're caught with your hand in the cookie jar, it takes the sting out of them.... very easy to apprehend him and shame him in public...... Their strength is people and people will not support a molester. (I hope).....
Media took exceptions to all that Khadim Rizvi stood for, he had power..... Where is the media now?
 

Islamabadiya

Minister (2k+ posts)
ملٹری ملا الائینس ایک گھڑا ہوا محاورہ نہیں حقیقت ہے۔ ان کی بدمعاشی کے پیچھے اسٹیبلشمینٹ ہے۔ جو بچہ ان کے چنگل میں پھنس گیا وہ مر کر ہی نجات پاسکتا ہے سمجھ لو کہ بیگار کیمپ جیسا ماحول ہوتا ہے اندر

but this is a civilian matter, nothing is stopping pti from taking action.
but yeh govt he londay bazon ke hay so they don’t mind
 

ranaji

President (40k+ posts)
بقول گشتی فراری اور میڈیا کے پی ٹی آئی حکومت نہیں چلا رہی اور حکومت فوجی جرنیل چلا رہے ہیں اور مولوی خنزیری منافق اسلام فروش مودی کا بلڈاگ بھی وہی بھونک رہا ہے کہ مجھ سے چوہدریوں کے تھرو فوجی ان جرنیلوں نے وعدہ کیا تھا اس حکومت کو چلتا کریں گے اور تمہیں حکومت دے دیں گے
پھر نواز شریف نے بھی ہلیہی کہا تو پھر حکومت سے کوئی ڈیمانڈ نہیں بنتی
تو پھر سوال یہ جرنیلوں سے کرنے کی ضرورت ہے جرنیلوُ ان مدرسوں میں چھپے ہوئے جانوروں مولوی کے روپ میں ممیسیوں بچوں کے ساتھ بد فعلی کرنے والے اور اپنے ساتھ بد فعلی کروانے والے ان گے آگے پیچھے اوپر نیچے کے ممیسیئے فضلو خنزیری اس کے مفتی کفایت ٹائیپ حرامیوں کو سزا کیوں نہیں ہوتی کیوں غریبوں کے بچوں کو فضلو خنزیری نطفہ حرام کے جیسے ۔۔۔زادوں کے رحم کرم پر مدرسوں میں چھوڑا گیا ہے کیوں جرنیل حکومت نہیں کیونکہ نواز شریف اور فضلو خنزیری نطفہ حرام منافق اسلام فروش فراڈئے بدکاری کرنے والا اور اپنے ساتھ بد کاری کرانے والا یہی کہہ رہے ہیں کہ حکومت جرنیل چلا رہے ہیں تو جرنیلوں کیوں ان ۔۔۔زادوں ممیسیوں مفتیوں اور مولویوں کے روپ میں شیطانوں کو پکڑا جاتا کیوں مدرسوں کو کھلی چھوٹ ہے غریبوں کے بچوں کے ساتھ بدفعلی کرنے کی
جرنیلو جواب دو فضلو خنزیری بلڈاگ کے بقول حکومت جرنیل چلا رہے ہیں
 

akinternational

Minister (2k+ posts)
ایک ویڈیو گردش کررہی ہے جس میں دیکھا جاسکتا ہے کہ بنوریہ ٹاون کے مہتمم اعلی جس کی عمر کم از کم ستر سال ہوگی ایک طالبعلم سے بدفعلی کا ارتکاب کررہا ہے۔ اسی طرح ایک سابقہ ویڈیو میں ایک اور ستر پچھتر سالہ مہتمم ایک دس سالہ بچے سے اورل سیکس میں مصروف ہے مفتی اعلی نے اپنا عضو تناسل ٹوپی پہنے ہوے بچے کے منہ میں دے رکھا ہے اور اسے چوسنے پر مجبور کررہے ہیں، بنوریہ ٹاون کا یہ مہتمم مولوی جب جوان تھا تو اس نے کیا کیا شیطانی کام کئے ہونگے اس کا تصور کرنے سے بھی گھن آتی ہے
یہ حال سب سے بڑے مہتمم کا ہے اس کے نیچے جو نوجوان اساتذہ مولوی اور دیگر عملہ ہے ان کا کیا حال ہوگا وہ تصور سے باہر ہے۔ مدرسے کے قریب ایک ڈاکٹر جو مالی مفادات کے پیش نظر منہ نہیں کھولتا کیونکہ اس مدرسے کے تمام مریض اسی نے دیکھنے ہوتے ہیں کے مطابق بچوں کے مقعد زیادتی کے باعث پھٹ جاتے ہیں اور بلیڈنگ کی وجہ سے ان کی حالت غیر ہوتی ہے کئی بار اس نے بچوں کو کہا کہ وہاں سے چلے جائیں اور اپنے والدین کو اطلاع کریں کئی ایک نے ایسا کیا اور وہاں سے چلے بھی گئے مگر بہت سارے ڈر کی وجہ سے چپ ہوجاتے ہیں جس کی وجہ سے یہ شیطانی کام مدارس کے اندر جاری و ساری ہے عموما جو بچے مدارس کے اندر قیام پزیر ہوتے ہیں ان کی راتیں بہت تکلیف دہ گزرتی ہیں
قارعین یہ مت سمجھیں کہ مجھےمولویوں سے کوی پرخاش ہے۔ میں جو بھی کہتا ہوں حقائق پر ہوتا ہے۔ مولوی سمیع الحق کی مشکوک انداز میں موت بھی اسی وجہ سے ہوی تھی۔ مولوی سمعیع الحق کے ساتھ ایک اٹھارہ سال کا لونڈا ٹھہرا ہوا تھا جو مولوی کو کھانا پینا اور مساج بھی کرتا تھا جب مولوی کی لاش ملی تو وہ ینگ نوجوان غائب تھا اور پولیس کو دوبارہ اس تک رسای خود مولوی سمیع الحق کے بیٹوں نے نہیں ہونے دی اور پی ٹی آی کے سابق وزیراعلی پرویز خٹک جو اکوڑہ خٹک سے گہرے روابط رکھتا ہے کو کہلا کر یہ کیس دبا دیا گیا، مولوی سمیع الحق کو بہت اناڑی طریقے سے چھریاں ماری گئی تھیں جو کسی تجربہ کار قاتل کا کام نہیں ہوسکتا ویسے بھی پستول اور گنیں بھی دستیاب ہیں مگر کچن کی چھری کا استعمال بہت کچھ بتا رہا تھا
ان واقعات سے ملک کی بدنانی ہورہی ہے دیوبندی مدارس کا اس میں بہت بڑا کردار ہے جنکے بانی کے حجرے کے بارے میں بھی ایسی ہی باتیں مشہور تھیں
حکومت فی الفور ان مدارس کو بند کردے اور اگر یہ شور شرابا کریں تو فوج کے تھرو ان کو کنٹرول کیا جاے
حکومت فوری طور پر انڈین ایجنٹ دیوبندی مولوی طاہر اشرفی کو برخواست کرکے اس کے خلاف کاروای کرے کیونکہ وہ بھی ایک بدکردار مولوی ہے جو شرابی بھی ہے ۔ اور شراب کے نشے میں گرفتار بھی ہوچکا ہے۔ کئی بار ٹی وی پر شراب کے نشے میں دھت بات کرتا رہا ہے ۔یہ انڈیا سے بھی خفیہ رابطے رکھتا ہے، اس کے مدرسوں میں بھی یہی شیطانی دھندہ کھلم کھلا کیا جارہا ہے
ehre is the video send the link plz
 

Husaink

Chief Minister (5k+ posts)
دیوبندی مدارس اور ندوہ علما کی جب بات ہوتی ہے تو اکیلے فضلو کی نہیں سارے فرقہ دیوبند کی بات ہورہی ہوتی ہے جس کا رکن طاہر اشرفی بھی ہے اور نورالحق پادری مذہبی وزیر بھی
ہم اپنے مولویوں کو سمبھال لیں گے تم اپنے لیڈر مولوی کی فکر کرو آجکل مریم کے کانوں میں کافی پھوکیں مارتا ہے کہیں جنید کا تو نہیں پوچھتا ؟
 

ts_rana

Senator (1k+ posts)
These people are above state. They possess more power than the state. Most Pakistanis are illiterate and religiously extremist. They will kill or get killed when it's anything remotely related to these molvis or religious dialogue. No one can touch them

So who will take step to stop them ?? Everywhere is Mafia in Pakistan. The problem is that People of Pakistan dont know the difference between bad and good.
 

Munawarkhan

Minister (2k+ posts)
You have stooped down really low with this post, not because you highlighted the current case of paedophilic maulvi , but because you somehow thought it was necessary to place allegation on marhoom Maulana Sami ul Haq, without having evidence against him.

He is no more here, and all of this will not make a difference to him, but this sick thinking of yours will not help you in this life or the next.


ایک ویڈیو گردش کررہی ہے جس میں دیکھا جاسکتا ہے کہ بنوریہ ٹاون کے مہتمم اعلی جس کی عمر کم از کم ستر سال ہوگی ایک طالبعلم سے بدفعلی کا ارتکاب کررہا ہے۔ اسی طرح ایک سابقہ ویڈیو میں ایک اور ستر پچھتر سالہ مہتمم ایک دس سالہ بچے سے اورل سیکس میں مصروف ہے مفتی اعلی نے اپنا عضو تناسل ٹوپی پہنے ہوے بچے کے منہ میں دے رکھا ہے اور اسے چوسنے پر مجبور کررہے ہیں، بنوریہ ٹاون کا یہ مہتمم مولوی جب جوان تھا تو اس نے کیا کیا شیطانی کام کئے ہونگے اس کا تصور کرنے سے بھی گھن آتی ہے
یہ حال سب سے بڑے مہتمم کا ہے اس کے نیچے جو نوجوان اساتذہ مولوی اور دیگر عملہ ہے ان کا کیا حال ہوگا وہ تصور سے باہر ہے۔ مدرسے کے قریب ایک ڈاکٹر جو مالی مفادات کے پیش نظر منہ نہیں کھولتا کیونکہ اس مدرسے کے تمام مریض اسی نے دیکھنے ہوتے ہیں کے مطابق بچوں کے مقعد زیادتی کے باعث پھٹ جاتے ہیں اور بلیڈنگ کی وجہ سے ان کی حالت غیر ہوتی ہے کئی بار اس نے بچوں کو کہا کہ وہاں سے چلے جائیں اور اپنے والدین کو اطلاع کریں کئی ایک نے ایسا کیا اور وہاں سے چلے بھی گئے مگر بہت سارے ڈر کی وجہ سے چپ ہوجاتے ہیں جس کی وجہ سے یہ شیطانی کام مدارس کے اندر جاری و ساری ہے عموما جو بچے مدارس کے اندر قیام پزیر ہوتے ہیں ان کی راتیں بہت تکلیف دہ گزرتی ہیں
قارعین یہ مت سمجھیں کہ مجھےمولویوں سے کوی پرخاش ہے۔ میں جو بھی کہتا ہوں حقائق پر ہوتا ہے۔ مولوی سمیع الحق کی مشکوک انداز میں موت بھی اسی وجہ سے ہوی تھی۔ مولوی سمعیع الحق کے ساتھ ایک اٹھارہ سال کا لونڈا ٹھہرا ہوا تھا جو مولوی کو کھانا پینا اور مساج بھی کرتا تھا جب مولوی کی لاش ملی تو وہ ینگ نوجوان غائب تھا اور پولیس کو دوبارہ اس تک رسای خود مولوی سمیع الحق کے بیٹوں نے نہیں ہونے دی اور پی ٹی آی کے سابق وزیراعلی پرویز خٹک جو اکوڑہ خٹک سے گہرے روابط رکھتا ہے کو کہلا کر یہ کیس دبا دیا گیا، مولوی سمیع الحق کو بہت اناڑی طریقے سے چھریاں ماری گئی تھیں جو کسی تجربہ کار قاتل کا کام نہیں ہوسکتا ویسے بھی پستول اور گنیں بھی دستیاب ہیں مگر کچن کی چھری کا استعمال بہت کچھ بتا رہا تھا
ان واقعات سے ملک کی بدنانی ہورہی ہے دیوبندی مدارس کا اس میں بہت بڑا کردار ہے جنکے بانی کے حجرے کے بارے میں بھی ایسی ہی باتیں مشہور تھیں
حکومت فی الفور ان مدارس کو بند کردے اور اگر یہ شور شرابا کریں تو فوج کے تھرو ان کو کنٹرول کیا جاے
حکومت فوری طور پر انڈین ایجنٹ دیوبندی مولوی طاہر اشرفی کو برخواست کرکے اس کے خلاف کاروای کرے کیونکہ وہ بھی ایک بدکردار مولوی ہے جو شرابی بھی ہے ۔ اور شراب کے نشے میں گرفتار بھی ہوچکا ہے۔ کئی بار ٹی وی پر شراب کے نشے میں دھت بات کرتا رہا ہے ۔یہ انڈیا سے بھی خفیہ رابطے رکھتا ہے، اس کے مدرسوں میں بھی یہی شیطانی دھندہ کھلم کھلا کیا جارہا ہے
 

Logic

Politcal Worker (100+ posts)
ایک ویڈیو گردش کررہی ہے جس میں دیکھا جاسکتا ہے کہ بنوریہ ٹاون کے مہتمم اعلی جس کی عمر کم از کم ستر سال ہوگی ایک طالبعلم سے بدفعلی کا ارتکاب کررہا ہے۔ اسی طرح ایک سابقہ ویڈیو میں ایک اور ستر پچھتر سالہ مہتمم ایک دس سالہ بچے سے اورل سیکس میں مصروف ہے مفتی اعلی نے اپنا عضو تناسل ٹوپی پہنے ہوے بچے کے منہ میں دے رکھا ہے اور اسے چوسنے پر مجبور کررہے ہیں، بنوریہ ٹاون کا یہ مہتمم مولوی جب جوان تھا تو اس نے کیا کیا شیطانی کام کئے ہونگے اس کا تصور کرنے سے بھی گھن آتی ہے
یہ حال سب سے بڑے مہتمم کا ہے اس کے نیچے جو نوجوان اساتذہ مولوی اور دیگر عملہ ہے ان کا کیا حال ہوگا وہ تصور سے باہر ہے۔ مدرسے کے قریب ایک ڈاکٹر جو مالی مفادات کے پیش نظر منہ نہیں کھولتا کیونکہ اس مدرسے کے تمام مریض اسی نے دیکھنے ہوتے ہیں کے مطابق بچوں کے مقعد زیادتی کے باعث پھٹ جاتے ہیں اور بلیڈنگ کی وجہ سے ان کی حالت غیر ہوتی ہے کئی بار اس نے بچوں کو کہا کہ وہاں سے چلے جائیں اور اپنے والدین کو اطلاع کریں کئی ایک نے ایسا کیا اور وہاں سے چلے بھی گئے مگر بہت سارے ڈر کی وجہ سے چپ ہوجاتے ہیں جس کی وجہ سے یہ شیطانی کام مدارس کے اندر جاری و ساری ہے عموما جو بچے مدارس کے اندر قیام پزیر ہوتے ہیں ان کی راتیں بہت تکلیف دہ گزرتی ہیں
قارعین یہ مت سمجھیں کہ مجھےمولویوں سے کوی پرخاش ہے۔ میں جو بھی کہتا ہوں حقائق پر ہوتا ہے۔ مولوی سمیع الحق کی مشکوک انداز میں موت بھی اسی وجہ سے ہوی تھی۔ مولوی سمعیع الحق کے ساتھ ایک اٹھارہ سال کا لونڈا ٹھہرا ہوا تھا جو مولوی کو کھانا پینا اور مساج بھی کرتا تھا جب مولوی کی لاش ملی تو وہ ینگ نوجوان غائب تھا اور پولیس کو دوبارہ اس تک رسای خود مولوی سمیع الحق کے بیٹوں نے نہیں ہونے دی اور پی ٹی آی کے سابق وزیراعلی پرویز خٹک جو اکوڑہ خٹک سے گہرے روابط رکھتا ہے کو کہلا کر یہ کیس دبا دیا گیا، مولوی سمیع الحق کو بہت اناڑی طریقے سے چھریاں ماری گئی تھیں جو کسی تجربہ کار قاتل کا کام نہیں ہوسکتا ویسے بھی پستول اور گنیں بھی دستیاب ہیں مگر کچن کی چھری کا استعمال بہت کچھ بتا رہا تھا
ان واقعات سے ملک کی بدنانی ہورہی ہے دیوبندی مدارس کا اس میں بہت بڑا کردار ہے جنکے بانی کے حجرے کے بارے میں بھی ایسی ہی باتیں مشہور تھیں
حکومت فی الفور ان مدارس کو بند کردے اور اگر یہ شور شرابا کریں تو فوج کے تھرو ان کو کنٹرول کیا جاے
حکومت فوری طور پر انڈین ایجنٹ دیوبندی مولوی طاہر اشرفی کو برخواست کرکے اس کے خلاف کاروای کرے کیونکہ وہ بھی ایک بدکردار مولوی ہے جو شرابی بھی ہے ۔ اور شراب کے نشے میں گرفتار بھی ہوچکا ہے۔ کئی بار ٹی وی پر شراب کے نشے میں دھت بات کرتا رہا ہے ۔یہ انڈیا سے بھی خفیہ رابطے رکھتا ہے، اس کے مدرسوں میں بھی یہی شیطانی دھندہ کھلم کھلا کیا جارہا ہے


ببر شیر صاحب
آپ سے اس طرح کی غلط بیانی کی توقع نہیں تھی . باقی تفصیلات اپنی جگہ لیکن یہ جو آپ نے پورے واقعہ کو بنوری ٹاؤن کے سر تھوپنے کی کوشش کی ہے وہ دستیاب معلومات کے مطابق خلاف واقعہ ہے . یہ تو ایسا ہی ہے جیسے قائد اعظم یونیورسٹی کے واقعات کے لئے کراچی یونیورسٹی کو بدنام کیا جاۓ . یہ یقینا اخلاقیات کے منافی اور معافی طلب ہے
 

usman1278

Voter (50+ posts)
Yeah Bubber Shair jhoot bol raha hai video lahore ki hai aur harkat aik mukami mulvi kar raha hai islami mdaris ko badnam karna band karo aur is mulvi aur is idaray ko nishan e ibrat bnao
Aziz ur rehman mulvi ka nam hai
 

usman1278

Voter (50+ posts)
اسی خبر کے ساتھ ایک اور بہت بڑا اور بھیانک اسکینڈل بھی جڑا ہوا ہے جس پر تحقیق کرنی بہت ضروری ہے
مشرف دور میں جب ق لیگ کی حکومت تھی تو شمالی علاقہ جات خاص کر کشمیر اوراس سے ملحقہ علاقوں میں خوفناک زلزلے سے لاکھوں لوگ ہلاک ہوگئے تھے ہزاروں بچے یتیم ہوگئے تھے
اس وقت ایسے بچے جن کے ماں باپ بہن بھای سب اس زلزلے میں ہلا ک ہوگئے تھے اور ان کی عمریں ابھی پانچ چھ سال تک تھیں کئی شیرخوار بچے تھے جنہیں لینے کیلئے برطانیہ سے بے شمار درخواستیں آی تھیں مگر ان درخواستوں کو رد کردیا گیا ۔ بعد میں یہ بچے اسی لونڈے باز مولوی کے مدرسے جامعہ بنوریہ کے سپرد کردئیے گئے۔ یہ راز کبھی نہ کھلتا مگر ایکدفعہ مفتی نعیمی نے ٹی وی پر ان بچوں کے حوالے سے چندہ مانگنا شروع کردیا جس سے بات کھل گئی
اس شرمناک حرکت اور گناہ کبیرہ پر مشرف اور ق لیگ کے لیڈروں کو پھانسی بھی دے دی جاے تو کم ہوگی کیونکہ جامعہ بنوریہ کو دینے سے پہلے ان بچوں کی مرضی نہیں پوچھی گئی ان کے مان باپ تو زلزلے میں مارے جاچکے تھے ان کا کچھ بھی پتا نہیں تھا کہ وہ کس گھرانے کے ہیں مگر اس بے شرمی اور ظلم سے انہیں مولوی کے حوالے کردیا گیا جو ناقابل تلافی گناہ ہے
اس کی تحقیقات ہونی چاہئے کہ جب اورسیز پاکستانی ان بچوں کو لینے کیلئے تیار تھے تو کیوں ان کو جامعہ بنوریہ کے حوالے کیا گیا؟
مفتی کی اپنی زبانی دو ڈھای سو بچے تھے جو حکمرانوں نے ان کو تحفے میں دئیے۔ یہ ناقابل معافی جرم تھا جس کی کسی کو خبر تک نہ ہوی کیونکہ شیرخوار بچے اس قابل ہی نہیں تھے کہ احتجاج کرسکتے۔ یہ سارے مجرم بہت بری زندگی گزار رہے ہیں مگر ان کو ٹرائل کرکے سزا دینی بھی ضروری ہے
اس سے یہ بھی پتا چلتا ہے کہ اسٹیبلشمینٹ کسطرح اپنے من پسند ملاوں کو نوازتی ہے
Bnori town karachi main hai kisi hindu ki aulad aur yeah sub lahore ka waqia hai aik kuttay ki harkat ko sub par mut thopo
 

Kamboz

Senator (1k+ posts)
ایک ویڈیو گردش کررہی ہے جس میں دیکھا جاسکتا ہے کہ بنوریہ ٹاون کے مہتمم اعلی جس کی عمر کم از کم ستر سال ہوگی ایک طالبعلم سے بدفعلی کا ارتکاب کررہا ہے۔ اسی طرح ایک سابقہ ویڈیو میں ایک اور ستر پچھتر سالہ مہتمم ایک دس سالہ بچے سے اورل سیکس میں مصروف ہے مفتی اعلی نے اپنا عضو تناسل ٹوپی پہنے ہوے بچے کے منہ میں دے رکھا ہے اور اسے چوسنے پر مجبور کررہے ہیں، بنوریہ ٹاون کا یہ مہتمم مولوی جب جوان تھا تو اس نے کیا کیا شیطانی کام کئے ہونگے اس کا تصور کرنے سے بھی گھن آتی ہے
یہ حال سب سے بڑے مہتمم کا ہے اس کے نیچے جو نوجوان اساتذہ مولوی اور دیگر عملہ ہے ان کا کیا حال ہوگا وہ تصور سے باہر ہے۔ مدرسے کے قریب ایک ڈاکٹر جو مالی مفادات کے پیش نظر منہ نہیں کھولتا کیونکہ اس مدرسے کے تمام مریض اسی نے دیکھنے ہوتے ہیں کے مطابق بچوں کے مقعد زیادتی کے باعث پھٹ جاتے ہیں اور بلیڈنگ کی وجہ سے ان کی حالت غیر ہوتی ہے کئی بار اس نے بچوں کو کہا کہ وہاں سے چلے جائیں اور اپنے والدین کو اطلاع کریں کئی ایک نے ایسا کیا اور وہاں سے چلے بھی گئے مگر بہت سارے ڈر کی وجہ سے چپ ہوجاتے ہیں جس کی وجہ سے یہ شیطانی کام مدارس کے اندر جاری و ساری ہے عموما جو بچے مدارس کے اندر قیام پزیر ہوتے ہیں ان کی راتیں بہت تکلیف دہ گزرتی ہیں
قارعین یہ مت سمجھیں کہ مجھےمولویوں سے کوی پرخاش ہے۔ میں جو بھی کہتا ہوں حقائق پر ہوتا ہے۔ مولوی سمیع الحق کی مشکوک انداز میں موت بھی اسی وجہ سے ہوی تھی۔ مولوی سمعیع الحق کے ساتھ ایک اٹھارہ سال کا لونڈا ٹھہرا ہوا تھا جو مولوی کو کھانا پینا اور مساج بھی کرتا تھا جب مولوی کی لاش ملی تو وہ ینگ نوجوان غائب تھا اور پولیس کو دوبارہ اس تک رسای خود مولوی سمیع الحق کے بیٹوں نے نہیں ہونے دی اور پی ٹی آی کے سابق وزیراعلی پرویز خٹک جو اکوڑہ خٹک سے گہرے روابط رکھتا ہے کو کہلا کر یہ کیس دبا دیا گیا، مولوی سمیع الحق کو بہت اناڑی طریقے سے چھریاں ماری گئی تھیں جو کسی تجربہ کار قاتل کا کام نہیں ہوسکتا ویسے بھی پستول اور گنیں بھی دستیاب ہیں مگر کچن کی چھری کا استعمال بہت کچھ بتا رہا تھا
ان واقعات سے ملک کی بدنانی ہورہی ہے دیوبندی مدارس کا اس میں بہت بڑا کردار ہے جنکے بانی کے حجرے کے بارے میں بھی ایسی ہی باتیں مشہور تھیں
حکومت فی الفور ان مدارس کو بند کردے اور اگر یہ شور شرابا کریں تو فوج کے تھرو ان کو کنٹرول کیا جاے
حکومت فوری طور پر انڈین ایجنٹ دیوبندی مولوی طاہر اشرفی کو برخواست کرکے اس کے خلاف کاروای کرے کیونکہ وہ بھی ایک بدکردار مولوی ہے جو شرابی بھی ہے ۔ اور شراب کے نشے میں گرفتار بھی ہوچکا ہے۔ کئی بار ٹی وی پر شراب کے نشے میں دھت بات کرتا رہا ہے ۔یہ انڈیا سے بھی خفیہ رابطے رکھتا ہے، اس کے مدرسوں میں بھی یہی شیطانی دھندہ کھلم کھلا کیا جارہا ہے
Those evil Mullah is from JUI-F
 

HimSar

Minister (2k+ posts)
Sick bastards who are otherwise doing great in life, no issues, just occasional hiccups like these. Whoever calls this homosexuality is doing the abuser a favour. This is child abuse, underage rape. Not consenting adults committing a prohibited actibity. That is another category. Only when a molvi will be tried for child abuse will real hope for change take root. IK 's plate's overflowing. Can someone else take care of this? SC?
 
Sponsored Link

Featured Discussion Latest Blogs اردوخبریں