بنگلادیش میں قرآن پاک کی مبینہ بے حرمتی،مسلمان سراپا احتجاج

banga.jpg


بنگلادیش کے مندر میں قرآن کی مبینہ بے حرمتی پر مسلمان سراپا احتجاج ہیں،غصے میں مسلمانوں نے مندر کو منہدیم کردیا، جبکہ واقعے میں دو ہندو بھی جان سے گئے،بنگلادیش میں ہندو تہوار کے موقع پر ایک مندر میں قرآن کی مبینہ بے حرمتی کی تصاویر وائرل ہوئیں جس پر مسلمانوں شدید برہم ہوئے اور ملک گیر احتجاج کیا گیا۔


مسلمان مظاہرین نے ذمہ داروں کو کڑی سے کڑی سزا دینے کا مطالبہ کردیا، اس دوران پولیس اور مظاہرین کے درمیان جھڑپیں بھی ہوئیں،تین روز سے جاری مظاہروں نے شدت اختیار کرلی، بنگلا دیش پولیس نے اب تک 300 سے زائد مظاہرین کو حراست میں لے لیا اور ملک کے حساس علاقوں میں سیکیورٹی بڑھا دی گئی۔

دوسری جانب بھارتی حکام نے دو ہندوؤں کی ہلاکت پر بنگلہ دیشی حکومت سے احتجاج کیا،بنگلہ دیش کی وزیراعظم حسینہ واجد کا کہنا ہے کہ بھارت کو اپنی اقلیتیوں سے بہتر سلوک کرنا چاہیے،بھارت میں مسلمانوں سے ہونے والے سلوک کا اثر یہاں بھی ہوتا ہے۔
 
Advertisement

angryoldman

Minister (2k+ posts)
حسینہ اور انڈیا کی اتنے سالوں کی مشترکہ محنت بھی اسلام پسندوں کو دیوار سے نہیں لگا سکی۔ بلکہ اثر الٹا ہوا ہے اور وہ انقلابی شکل اختیار کر چکے ہیں۔ اس سے پہلے مودی کے دورہ پر بھی یہ ثابت ہو چکا ہے۔
 

shaheenzafar

MPA (400+ posts)
لبرل حکومتیں ہمیشہ اسلام مخالف ہی ہوتی ہین بنگلہ دیش نے جب سیکولرازم کو اپنایا تو کہی چیزوں پر پابندی لگا دی لیکن عوام پھر بھی اپنی جگہ دین پر قائم ہیں جو حسینہ واجد نہی کنٹرول کرسکتی ہے
 
Sponsored Link