میرا گلا بھی نور مقدم کی طرح کاٹ دیا جائے گا - بگٹی کی بہو

Eyeaan

Chief Minister (5k+ posts)
Police must provide her protection and safeguard her family members.
She should also stop using religious conflict in this domestic matter - even if there is some truth to her allegations, she wouldn't be able to prove this in the court of law. .She should leave such allegation to god and his conscious.
 

brohiniaz

Minister (2k+ posts)

ابوموسیٰ عبداللہ بن قیس اشعری رضی اللہ عنہ کہتے ہیں کہ نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کو جب کسی قوم سے خوف ہوتا تو فرماتے: «اللهم إنا نجعلك في نحورهم ونعوذ بك من شرورهم‏

”اے اللہ! ہم تجھے ان کے بالمقابل کرتے ہیں اور ان کی برائیوں سے تیری پناہ طلب کرتے ہیں“۔

تفرد بہ أبوداود، (تحفة الأشراف:9127)، وقد أخرجہ: سنن النسائی/ الیوم واللیلة (601)، مسند احمد (4/414، 415) (صحیح)» ‏‏‏‏
 

knowledge88

Minister (2k+ posts)
ابوموسیٰ عبداللہ بن قیس اشعری رضی اللہ عنہ کہتے ہیں کہ نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کو جب کسی قوم سے خوف ہوتا تو فرماتے: «اللهم إنا نجعلك في نحورهم ونعوذ بك من شرورهم‏

”اے اللہ! ہم تجھے ان کے بالمقابل کرتے ہیں اور ان کی برائیوں سے تیری پناہ طلب کرتے ہیں“۔

تفرد بہ أبوداود، (تحفة الأشراف:9127)، وقد أخرجہ: سنن النسائی/ الیوم واللیلة (601)، مسند احمد (4/414، 415) (صحیح)» ‏‏‏‏
آپ نے لکھا ہے " نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کو جب کسی قوم سے خوف ہوتا تو فرماتے"
یہ بلکل درست نہیں ہے . نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم صرف الله سے ڈرتے تھے . جب نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم , الله کو مدد کے لئے پکارتے تھے تو اس کا مطلب یہ نہیں کے آپ اس قوم سے
خوف زدہ تھے .
آپ صلی اللہ علیہ وسلم مسلمانوں کے لئے مثال ہیں اور ایک مسلمان صرف الله سے ڈرتا ہے
 

brohiniaz

Minister (2k+ posts)
آپ نے لکھا ہے " نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کو جب کسی قوم سے خوف ہوتا تو فرماتے"
یہ بلکل درست نہیں ہے . نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم صرف الله سے ڈرتے تھے . جب نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم , الله کو مدد کے لئے پکارتے تھے تو اس کا مطلب یہ نہیں کے آپ اس قوم سے
خوف زدہ تھے .
آپ صلی اللہ علیہ وسلم مسلمانوں کے لئے مثال ہیں اور ایک مسلمان صرف الله سے ڈرتا ہے

میں نے نہیں لکھا یے سنن ابو دائود کی حدیث میں " شُرُورِهِمْ " کا مطلب خوف لیا گیا ہے ، جس کا ایک مطلب " شر" بھی ہے
كتاب الوتر
8
Prayer (Kitab Al-Salat): Detailed Injunctions about Witr



(516)
Chapter: What Should One Say When He Is Afraid Of A People ?
(30)
باب مَا يَقُولُ إِذَا خَافَ قَوْمًا

ابوموسیٰ عبداللہ بن قیس اشعری رضی اللہ عنہ کہتے ہیں کہ نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کو جب کسی قوم سے خوف ہوتا تو فرماتے : «اللهم إنا نجعلك في نحورهم ونعوذ بك من شرورهم‏» ” اے اللہ ! ہم تجھے ان کے بالمقابل کرتے ہیں اور ان کی برائیوں سے تیری پناہ طلب کرتے ہیں “ ۔
حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ الْمُثَنَّى، حَدَّثَنَا مُعَاذُ بْنُ هِشَامٍ، حَدَّثَنِي أَبِي، عَنْ قَتَادَةَ، عَنْ أَبِي بُرْدَةَ بْنِ عَبْدِ اللَّهِ، أَنَّ أَبَاهُ، حَدَّثَهُ أَنَّ النَّبِيَّ صلى الله عليه وسلم كَانَ إِذَا خَافَ قَوْمًا قَالَ ‏ "‏ اللَّهُمَّ إِنَّا نَجْعَلُكَ فِي نُحُورِهِمْ وَنَعُوذُ بِكَ مِنْ شُرُورِهِمْ ‏"‏ ‏.‏


Grade: Sahih (Al-Albani) صحيح (الألباني)حكم :
Reference: Sunan Abi Dawud 1537
In-book reference: Book 8, Hadith 122
English translation: Book 8, Hadith 1532
 
Sponsored Link

Featured Discussion Latest Blogs خبریں