پارٹی ٹکٹ نہ ملنے پر بھارتی سیاستدان میڈیا کے سامنے روپڑا،ویڈیووائرل

arshad-rana-ticket--1-11.jpg


بھارت میں مسلمان سیاستدان بھی نشانے پر آگئے،بھارت کے مسلمان سیاستدان کو پارٹی ٹکٹ دینے کیلئے رشوت مانگ لی گئی،بھارتی سیاستدان پارٹی ٹکٹ نہ ملنے پر غم زدہ ہوگیا، روتے روتے دکھ کا اظہار کردیا۔

بہوجن سماج پارٹی کے رہنما ارشد رانا کی ایک ویڈیو وائرل ہورہی ہے جس میں وہ روتے ہوئے بتا رہا ہے کہ پارٹی نے ٹکٹ نہ دیا بلکہ پچاس لاکھ روپے کا مطالبہ کیا۔

بھارتی میڈیا کے مطابق بہوجن سماج پارٹی کے رہنما ارشد رانا جمعہ کو اترپردیش میں آئندہ انتخابات میں ٹکٹ نہ ملنے پر روئے اور پارٹہ کی جانب سے رشوت کے مطالبے پر بات کی۔


ارشد رانا نے کہا کہ پارٹی نے میرا مذاق بنادیا،میں نے کبھی نہیں سوچا تھا کہ ایسا ہوگا، آپ مجھ سے ٹکٹ دینے کا وعدہ کرتے ہیں اور پھر کسی اور دے دیتے ہیں، آپ لوگوں نے اخبارات اور ہورڈنگز پر روزانہ اشتہارات دیکھے ہوں گے میں ںے سب کچھ کیا۔

بھارتی سیاست دان نے مزید بتایا کہ24 سال سے پارٹی کے لیے کام کررہا ہوں، 2018 میں چارتھوال سے باضابطہ طور پر امیدوار کا اعلان کیا گیا،پارٹی سے رابطے کی کوشش کررہے ہیں لیکن کوئی مناسب جواب نہیں ملا اور پچاس لاکھ روپے کا بندوبست کرنے کے لیے کہا گیا۔

ارشد رانا کا کہنا تھا کہ 2022 کے یوپی انتخابات کے لیے 2018 میں چارتھوال سے رسمی طور پر امیدوار کا اعلان کیا گیا تھا،بی ایس پی نے چارتھوال اور گنگوہ اسمبلی سیٹوں سے اپنے امیدواروں کا اعلان کیا،مایا وتی کی قیادت والی پارٹی نے مغربی یوپی کی دونوں سیٹوں سے مسلم امیدوار کھڑے کیے۔


مایاوتی نے جمعرات کی صبح ٹویٹ میںبتایا کہ مظفر نگر ضلع کے سابق وزیر داخلہ جناب سید الزمان کے بیٹے سلمان سعید نے 12 جنوری کو دیر رات بی ایس پی سربراہ سے ملاقات کی اور کانگریس چھوڑ کر بہوجن سماج پارٹی میں شامل ہو گئے،سعید کو بی ایس پی نے چارتھاول اسمبلی سیٹ سے اپنے امیدوار کے طور پر میدان میں اتارا ہے۔

اتر پردیش میں 7 مرحلوں میں انتخابات ہوں گے، یوپی میں سات مرحلوں میں 10 فروری، 14 فروری، 20 فروری، 23 فروری، 27 فروری، 3 مارچ اور 7 مارچ کو ووٹنگ ہوگی، انتخابات کے نتائج کا اعلان 10 مارچ کو کیا جائے گا۔
 
Advertisement

arifkarim

Chief Minister (5k+ posts)
Premium Member
arshad-rana-ticket--1-11.jpg


بھارت میں مسلمان سیاستدان بھی نشانے پر آگئے،بھارت کے مسلمان سیاستدان کو پارٹی ٹکٹ دینے کیلئے رشوت مانگ لی گئی،بھارتی سیاستدان پارٹی ٹکٹ نہ ملنے پر غم زدہ ہوگیا، روتے روتے دکھ کا اظہار کردیا۔

بہوجن سماج پارٹی کے رہنما ارشد رانا کی ایک ویڈیو وائرل ہورہی ہے جس میں وہ روتے ہوئے بتا رہا ہے کہ پارٹی نے ٹکٹ نہ دیا بلکہ پچاس لاکھ روپے کا مطالبہ کیا۔

بھارتی میڈیا کے مطابق بہوجن سماج پارٹی کے رہنما ارشد رانا جمعہ کو اترپردیش میں آئندہ انتخابات میں ٹکٹ نہ ملنے پر روئے اور پارٹہ کی جانب سے رشوت کے مطالبے پر بات کی۔


ارشد رانا نے کہا کہ پارٹی نے میرا مذاق بنادیا،میں نے کبھی نہیں سوچا تھا کہ ایسا ہوگا، آپ مجھ سے ٹکٹ دینے کا وعدہ کرتے ہیں اور پھر کسی اور دے دیتے ہیں، آپ لوگوں نے اخبارات اور ہورڈنگز پر روزانہ اشتہارات دیکھے ہوں گے میں ںے سب کچھ کیا۔

بھارتی سیاست دان نے مزید بتایا کہ24 سال سے پارٹی کے لیے کام کررہا ہوں، 2018 میں چارتھوال سے باضابطہ طور پر امیدوار کا اعلان کیا گیا،پارٹی سے رابطے کی کوشش کررہے ہیں لیکن کوئی مناسب جواب نہیں ملا اور پچاس لاکھ روپے کا بندوبست کرنے کے لیے کہا گیا۔

ارشد رانا کا کہنا تھا کہ 2022 کے یوپی انتخابات کے لیے 2018 میں چارتھوال سے رسمی طور پر امیدوار کا اعلان کیا گیا تھا،بی ایس پی نے چارتھوال اور گنگوہ اسمبلی سیٹوں سے اپنے امیدواروں کا اعلان کیا،مایا وتی کی قیادت والی پارٹی نے مغربی یوپی کی دونوں سیٹوں سے مسلم امیدوار کھڑے کیے۔


مایاوتی نے جمعرات کی صبح ٹویٹ میںبتایا کہ مظفر نگر ضلع کے سابق وزیر داخلہ جناب سید الزمان کے بیٹے سلمان سعید نے 12 جنوری کو دیر رات بی ایس پی سربراہ سے ملاقات کی اور کانگریس چھوڑ کر بہوجن سماج پارٹی میں شامل ہو گئے،سعید کو بی ایس پی نے چارتھاول اسمبلی سیٹ سے اپنے امیدوار کے طور پر میدان میں اتارا ہے۔

اتر پردیش میں 7 مرحلوں میں انتخابات ہوں گے، یوپی میں سات مرحلوں میں 10 فروری، 14 فروری، 20 فروری، 23 فروری، 27 فروری، 3 مارچ اور 7 مارچ کو ووٹنگ ہوگی، انتخابات کے نتائج کا اعلان 10 مارچ کو کیا جائے گا۔
اچھا پاکستان کے سیاست دان تو صرف رلاتے ہیں
 
Sponsored Link