پاکستانی معیشت سے متعلق ایشیائی ترقیاتی بنک کی پیشنگوئی

adb11.jpg

ایشیائی ترقیاتی بینک کے کنٹری ڈائریکٹر یونگ ای کا کہنا ہے کہ پاکستانی معیشت بحالی کی راہ پر گامزن ہے، پاکستان میں صنعت اور خدمات کے شعبوں میں ترقی واضح ہے، کورونا ویکسی نیشن پروگرام کا تسلسل اور اصلاحات نمایاں محرک ہیں۔

ایشیائی ترقیاتی بینک کی رپورٹ کے مطابق مالی سال 21-2020 میں پاکستان کی معاشی شرح نمو 3.9 فیصد تک پہنچی، نئے مالی سال میں پاکستان کی معاشی نمو4.0 فیصد تک پہنچنے کی توقع ہے۔

کورونا کے دوسرے سال میں کاروباری سرگرمیاں دوبارہ شروع ہوں گی، نئے مالی سال 2022 میں پاکستانی معیشت کی بحالی جاری رہے گی۔ ایشیائی ترقیاتی بینک کی رپورٹ میں کہا گیا کہ کاروباری بہتری اور مستحکم ویکسین پروگرام اہم کردار ادا کررہے ہیں۔

معاشی شرح نمو کورونا کی دوسری اور تیسری لہروں پر کنٹرول کی حکمت عملی میں بہتر رہی۔ مسلسل مالی اور مالیاتی پالیسیوں کے ذریعے مدد سے معیشت کو تقویت ملی۔

مزید معاشی ترقی تعمیرات اور چھوٹے پیمانے پر مینوفیکچرنگ اور خدمات سے ممکن ہوگی، توقع ہے کہ ذراعت جی ڈی پی کی نمو کو جاری رکھے گی، سپلائی چین میں خلل سے گندم اور گنے کی قیمتوں میں اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے۔

پاکستان میں مون سون کی وجہ سے خوراک کی قیمتوں میں افراط زر بلند رہا، بین الاقوامی تیل قیمتوں میں اضافے نے توانائی قیمت میں افراط زر کو بڑھایا۔
 
Advertisement

imalam

MPA (400+ posts)
I don't know who to believe. Desperado or Rajarwal or these news. the price of domestic product have sky rocketed. What IK fail to work on Inflation.
 
Sponsored Link