انکم ٹیکس گوشوارے جمع نہ کرانے پر یومیہ کتنا جرمانہ اور قید بھی ہوسکتی ہے؟

504214_39900336.jpg


فیڈرل بورڈ آف ریونیو نے انکم ٹیکس گوشوارے جمع کرانے کیلئے 30 ستمبر تک کی ڈیڈلائن دے رکھی ہے جس سے متعلق ان کا کہنا ہے کہ اس تاریخ میں توسیع نہیں کی جائے گی۔

ایف بی آر نے خبردار کر دیا ہے کہ 30 ستمبر تک انکم ٹیکس گوشوارے جمع نہ کرانے کی صورت میں جرمانہ عائد کیا جائے گا جو یومیہ ایک ہزار روپے بڑھے گا۔ جب کہ نان فائلر ہونے کی صورت میں انکم ٹیکس گوشوارے جمع نہ کرانے پر 2 سال تک کی قید ہو سکتی ہے۔

وفاقی بورڈ آف ریونیو کے مطابق جن لوگوں پر انکم ٹیکس گوشوارے جمع کرانے لازمی ہیں ان میں سالانہ 3 لاکھ سے زائد کاروباری آمدن والے افراد یا ایسوسی ایشنز شامل ہیں۔ یہی نہیں سالانہ 6 لاکھ سے زائد آمدن والے تنخواہ دار افراد بھی اپنے انکم ٹیکس گوشوارے جمع کرائیں گے۔ ان کے علاوہ 5 سو مربع گز پراپرٹی یا فلیٹ مالکان کو بھی گوشوارے جمع کرانا ہوں گے۔

ایک ہزار سی سی یا اس سے بڑی گاڑی کے مالکان بھی ٹیکس ریٹرن فائل کرنے کے اہل ہیں۔ سالانہ 5 لاکھ سے زائد بجلی بل ادا کرنے والے صنعتی کاروباری صارفین کیلئے بھی ٹیکس گوشوارے جمع کرانا لازم ہے۔
 
Advertisement
Sponsored Link