سیاسی کارکنوں کی رہائش گاہوں پر چھاپے آئین کے منافی ہیں، سپریم کورٹ بار

4scbars%3Bamsmakhloothkoomat.jpg

سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے صدر محمد احسن بھون اور سیکرٹری وسیم ممتاز ملک نے کہا ہے کہ احتجاج کرنا اور کسی بھی سیاسی سرگرمی میں حصہ لینا پاکستان کے ہر شہری کا بنیادی حق ہے، حکومت کو کسی سیاسی جماعت کی سرگرمیوں میں رکاوٹ نہیں ڈالنی چاہیے۔

بار ایسوسی ایشن نے کہا کہ حکومت کو کسی شہری یا سیاسی کارکن کو بنیادی حقوق کے حصول سے روکنا نہیں چاہیے۔ سیاسی کارکن یا شہریوں کی رہائش گاہوں پر چھاپے مارے جا رہے ہیں جو کہ قانون اور آئین کے منافی ہیں۔

FThDDyAXEAYfceA


سپریم کورٹ بار نے حکومتی اقدامات کی مذمت کرتے کہا کہ وکلا کی رہائش گاہوں پر چھاپوں اور گرفتاریوں کی مذمت کرتے ہیں۔ بار کے عہدیداران نے اس بات پر اظہار تشویش کیا کہ جس طرح بابر اعوان اور فواد چودھری جیسے سینئر وکلا کو پیشہ ور سرگرمیوں سے روک دیا گیا۔

سپریم کورٹ بار نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ ایسی سرگرمیوں میں ملوث ہونے اور ایسے اقدامات کرنے سے گریز کرے جو قانون اور آئین کے خلاف ہوں اور ہر کسی کو آئین کے تحت ان کے بنیادی حقوق کا دفاع کرنے کی اجازت دی جائے۔
 
Advertisement
Sponsored Link