سیالکوٹ:پی ٹی آئی کارکنوں کی گرفتاری:شفقت محمود،اعجاز چودھری کا سخت ردعمل

shafqat-mehmod%20sialkot%20jalsa%20khan.jpg


سیالکوٹ میں عثمان ڈار سمیت پارٹی رہنماؤں اور کارکنوں کی گرفتاری پر تحریک انصاف پنجاب کے صدر شفقت محمود نے صوبائی حکومت کو خبردار کر دیا ہے۔

سابق وفاقی وزیر شفقت محمود نے کہا کہ سیالکوٹ میں پی ٹی آئی رہنماؤں کی گرفتاری کی مذمت کرتے ہیں، گرفتاریوں سے پی ٹی آئی سیالکوٹ کے جلسے کو نہیں روکا جا سکتا۔ حکومت کو وارننگ دیتے ہیں ہمارے گرفتار رہنماؤں کو فوری طور پر رہا کیا جائے۔

صدر پی ٹی آئی پنجاب نے مزید کہا کہ حکومت جلسے میں رکاوٹیں ڈالنے اور انتظامات کو نقصان پہنچانے سے باز رہے، پی ٹی آئی سیالکوٹ میں جلسہ ضرور کرے گی اور عمران خان سیالکوٹ کے عوام سے خطاب بھی کریں گے۔

"سینیٹر اعجاز چوہدری نے ردعمل دیتے ہوئے کہا "جعلی وزیر اعلی سُن لو! ہمارے کارکنان کو سیالکوٹ میں رہا کرو ورنہ آج رات کوہونے والا جلسہ اُنھیں خود رہا کروالے گا


یاد رہے کہ پی ٹی آئی کی جانب سے اجازت نہ ملنے کے باوجود سیالکوٹ کے سی ٹی آئی گراؤنڈ میں جلسے کی تیاریاں جاری تھیں کہ اسی دوران پولیس نے جلسہ گاہ پر کریک ڈاؤن کرتے ہوئے پی ٹی آئی رہنما عثمان ڈار سمیت متعدد رہنماؤں اور کارکنوں کو حراست میں لے لیا۔

جلسہ گاہ میں کارکنوں اور جلسے کے منتظمین کو منتشر کرنے کیلئے شیلنگ بھی کی گئی جس سے کارکن کافی پریشانی کا شکار ہوئے۔


سامنے آنے والی فوٹیجز میں دیکھا جا سکتا ہے کہ پولیس کارکنوں کے خلاف کارروائی کر رہی ہے جب کہ کارکن آنسو گیس کی شیلنگ سے بچنے کیلئے ناک اور منہ کو کپڑے سے ڈھانپتے رہے۔


گرفتاری کے بعد عثمان ڈار نے کارکنوں کیلئے ویڈیو پیغام جاری کیا جس میں کہا کہ پولیس کے ان اقدامات سے ڈرنے کی ضرورت نہیں۔ حقیقی آزادی مارچ کا آغاز ہو گیا ہے۔ یہ پی ٹی آئی کارکنوں کو گرفتار کریں، ہم جیلیں بھرنے کیلئے تیار ہیں، گرفتاریوں سے ڈرنے والے نہیں، عمران خان جلسے کیلئے سیالکوٹ ضرور پہنچیں گے۔

 
Advertisement

miafridi

Prime Minister (20k+ posts)
Any illegal act will only backfire on those who are doing things unconstitutionally.

امپورٹڈ_حکومت_نامنظور
 
Sponsored Link