شہراقتدار میں تحریک انصاف کی مقبولیت ن لیگ سے دوگنا،گیلپ

ملک کی سیاسی صورتحال خاصی پیچیدہ ہے، موجودہ حکومت اور پاکستان تحریک انصاف کے مابین اقتدار اور قبل از وقت انتخابات کروانے کی جنگ جاری ہے، جبکہ سیاسی مقبولیت کے اعتبار سے تحریک انصاف نے مسلم لیگ ن کو پیچھے چھوڑ دیا ہے۔
gallup111h2h1.jpg

گیلپ کے حالیہ سروے کے مطابق اسلام آباد شہر میں کیے گیلپ کے تازہ سروے میں تحریک انصاف سیاسی مقبولیت کے حوالے سے مسلم لیگ ن سے آگے ہے پی ٹی آئی %31 اور مسلم لیگ ن %15 مقبول ہیں۔

اس حوالے سے معروف صحافی اورکالم نگار اعزاز سید نے اپنی ٹوِئٹر پوسٹ میں ایک سکرین شاٹ شیئر کرتے ہوئے لکھا کہ اسلام آباد شہر میں کیے گیلپ کے تازہ سروے میں تحریک انصاف سیاسی مقبولیت کے حوالے سے مسلم لیگ ن سے آگے ہے یعنی دونوں میں تناسب %31 اور %15 کا ہے۔

FRaRR8iXoAAdtMP


صحافی نے مزید کہا کہ حیرت یہ کہ گیلپ نے اپنی پریس ریلیز میں یہ ذکر کرنا مناسب نہیں سمجھامقبولیت حالات کے اعتبار سےاوپر نیچے ہوتی ہے مگر سچ پورا بتانا ضروری ہے۔

دوسری جانب صحافی فہیم اختر ملک نے اعزاز سید کی ٹوئٹ کو شیئر کرتے ہوئے کہا کہ اگر گیلپ کے سروے کے مطابق پی ٹی آئی کی وفاق میں مقبولیت 31 فیصد ہے تو اس کا مطلب ہے اصل فگر 60 فیصد سے زیادہ ہونگے، گیلپ کی دو نمبری اس بات سے بھی عیاں ہے اپنی یہ والی فائنڈنگ کا پریس ریلیز میں زکر نہیں کیا۔۔کہیں سروے کرانے والے ناراض نہ ہوجائیں۔

واضح رہے کہ اس سے قبل بھی تازہ ترین سروے رپورٹ میں انکشاف ہوا ہے کہ 64 فیصد پاکستانی سابق وزیراعظم عمران خان کی حکومت کو مدت مکمل ہونے سے قبل ختم کیے جانے کے اقدام کی مخالفت کرتے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق آئی ریس کمیونیکیشنز کی جانب سے جاری کردہ تازہ ترین سروے رپورٹ میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ پاکستانیوں کی اکثریت عمران خان کی حکومت کو گرائے جانے اور اس کے پیچھے مہنگائی کی وجوہات کو ماننے کے خلاف ہیں۔
 
Advertisement
Last edited:

Terminator;

Minister (2k+ posts)
یہ پہلی لوڈشیڈنگ ہے جس میں نہ مجھے گرمی محسوس ہو رہی ہے، اور نہ شرم ۔۔۔۔
ایک شیم پروف پٹواری کا پسینہ پونچھتے ہوئے شوباز حکومت کے شدید لوڈ شیڈنگ پر مختصر تبصرہ
😁

 

Debunker1111

Politcal Worker (100+ posts)
جرنیل امریکا سے قومی مفادات بیچ کر ڈالر لیتے ہیں اور قوم کے سامنے سیاستدانوں کو لا کر خود چھپ جاتے ہیں تاکہ عوام بیوقوفی میں سیاستدانوں کو گالیاں دیں. عوام پاکستان مطالبہ کرتے ہیں کہ

١) کوئی فوجی اور اسکے بچے بیرون ملک کی شہریت نہیں لے سکتے. فوجی قوم کے دفاعی راز جانتے .ہیں لہذا انھیں باہر رہنے کی اجازت نہیں ہونی چاہئیے
.٢) فوجی اور اسکے گھر والے پاکستان سے باہر کوئی اثاثے نہیں رکھ سکتے
.٣) آرمی چیف اور قیادت دوسرےملک کے جمہوری نمائندوں سے نہیں مل سکتا. پاکستانی فوجی کس حیثیت میں دوسرے ممالک کے سفیروں اور سربراہان سے ملتے ہیں؟

٤) فوجی افسروں کی الگ پرتعیش کالونیز میں رہنے پر پابندی لگائی جاۓ (کینٹ وغیرہ). فوجیوں کے الگ ہسپتال اور اسکول بھی بند کیے جائیں. سارے فوجی عوام کے درمیان رہائش اختیار کریں اور جو سہولیات عوام کو میسّر ہیں وہی استعمال کریں. ایسا نہیں ہو سکتا کے عوام کے لیے ایک .پاکستان ہو اور فوجیوں کے لیے دوسرا پاکستان.

٥) پاکستان کے بڑے انتظامی عہدوں پر فوجی قبضہ کر کے بیٹھے ہوے ہیں. عہدے میرٹ پر ملنے .چاہییں، فوج سے وابستگی پر نہیں.

٦) ملک میں صدارتی نظام لایا جاۓ جسمیں عوام براہراست ملکی سربراہ منتخب کریں. فوج نے ہر حلقے میں طاقتور غنڈےرکھے ہوۓ ہیں جنھیں بار بار الیکشن جتوا کر اپنی مرضی کی حکومت/ وزیروزیرِاعظم لاتے ہیں.

٧) آئی ایس آئی کی سربراہی سویلین کو دی جاۓ اور ادارے کی تمام تفصیلات وزیروزیرِاعظم کو مکمّل بتائی جایئں.

٨) وزیروزیرِاعظم کی سیکورٹی ٹرپل-ون بریگیڈ نہیں بلکہ ایک طاقتور سویلین ادارہ کرے
٩) رینجرز ہر صوبے کے آئی جی کے ماتحت کی جاۓ.
١٠) جج بننے کے عمل کو شفاف بنایا تاکہ کرپٹ ججز فوج کے کہنے پر سیاسی فیصلے نہ دیں. نیز ہر عدالتی کیس کو ٩٠ دنوں میں لازمی نمٹایا جاۓ. فوج عدالت کے پیچھے چھپ کر ججز سے اپنی مرضی کے فیصلے کرواتی ہے.

١١) صدارتی الیکشن میں شفاف ٹیکنالوجی کا استعمال کیا جاۓ جسمیں دھاندلی کی کوئی گنجائش نہ ہو اور عوام براہراست ملکی سربراہ منتخب کریں.

١٢) مجرموں کی فوری سرعام پھانسی شروع کے جاۓ تاکہ دوسرے مجرموں کو عبرت ملے اور قانون کی دہشت قائم ہو.

١٣) مدرسوں اور تمام اداروں کے مالی معاملات کی سخت چھان بین کے جاۓ اور انکے اکاؤنٹس کا ہر سال آڈٹ کیا جاۓ تاکہ بیرون ملک سے فرقہ پرستی پھیلانے والے پیسے بند کیے سکیں.

.١٤) بیرون ملک پاکستانیوں کو فوری طور پر ووٹ کا حق دیا جاۓ.


باقی ہموطن اگر ان مطالبات سے اتفاق کریں تو ہر فورم پر پھیلائیں
 

arafay

Chief Minister (5k+ posts)
Gallup pakistan is a rubbish company. IRIS surveys are more accurate. Even in 2012, IRIS survey was more accurate than gallup.
 

miafridi

Prime Minister (20k+ posts)
ملک کی سیاسی صورتحال خاصی پیچیدہ ہے، موجودہ حکومت اور پاکستان تحریک انصاف کے مابین اقتدار اور قبل از وقت انتخابات کروانے کی جنگ جاری ہے، جبکہ سیاسی مقبولیت کے اعتبار سے تحریک انصاف نے مسلم لیگ ن کو پیچھے چھوڑ دیا ہے۔
gallup111h2h1.jpg

گیلپ کے حالیہ سروے کے مطابق اسلام آباد شہر میں کیے گیلپ کے تازہ سروے میں تحریک انصاف سیاسی مقبولیت کے حوالے سے مسلم لیگ ن سے آگے ہے پی ٹی آئی %31 اور مسلم لیگ ن %15 مقبول ہیں۔

اس حوالے سے معروف صحافی اورکالم نگار اعزاز سید نے اپنی ٹوِئٹر پوسٹ میں ایک سکرین شاٹ شیئر کرتے ہوئے لکھا کہ اسلام آباد شہر میں کیے گیلپ کے تازہ سروے میں تحریک انصاف سیاسی مقبولیت کے حوالے سے مسلم لیگ ن سے آگے ہے یعنی دونوں میں تناسب %31 اور %15 کا ہے۔

FRaRR8iXoAAdtMP


صحافی نے مزید کہا کہ حیرت یہ کہ گیلپ نے اپنی پریس ریلیز میں یہ ذکر کرنا مناسب نہیں سمجھامقبولیت حالات کے اعتبار سےاوپر نیچے ہوتی ہے مگر سچ پورا بتانا ضروری ہے۔

دوسری جانب صحافی فہیم اختر ملک نے اعزاز سید کی ٹوئٹ کو شیئر کرتے ہوئے کہا کہ اگر گیلپ کے سروے کے مطابق پی ٹی آئی کی وفاق میں مقبولیت 31 فیصد ہے تو اس کا مطلب ہے اصل فگر 60 فیصد سے زیادہ ہونگے، گیلپ کی دو نمبری اس بات سے بھی عیاں ہے اپنی یہ والی فائنڈنگ کا پریس ریلیز میں زکر نہیں کیا۔۔کہیں سروے کرانے والے ناراض نہ ہوجائیں۔

واضح رہے کہ اس سے قبل بھی تازہ ترین سروے رپورٹ میں انکشاف ہوا ہے کہ 64 فیصد پاکستانی سابق وزیراعظم عمران خان کی حکومت کو مدت مکمل ہونے سے قبل ختم کیے جانے کے اقدام کی مخالفت کرتے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق آئی ریس کمیونیکیشنز کی جانب سے جاری کردہ تازہ ترین سروے رپورٹ میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ پاکستانیوں کی اکثریت عمران خان کی حکومت کو گرائے جانے اور اس کے پیچھے مہنگائی کی وجوہات کو ماننے کے خلاف ہیں۔

امپورٹڈ_حکومت_نامنظور
 
Sponsored Link