عمران خان نے منی لانڈرنگ سے پیسا باہر بھجوایا، منحرف پی ٹی آئی رکن کا الزام

1uzmakardarilzamaat.jpg

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کی منحرف رہنما عظمیٰ کاردار نے کہا ہے کہ عمران خان وائٹ کالر کرائم کرتے رہے، خود پیچھے رہے اور اپنے ساتھ کے لوگوں سے کرپشن کروائی۔ وہ بھی منی لانڈرنگ سے پیسا باہر بھیجتے رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان کے دور حکومت میں جتنی کرپشن ہوئی اس کا 70 فیصد حصہ بنی گالہ گیا اور 30 فیصد باقیوں کی جیبوں میں گیا۔

عظمیٰ کاردار کا کہنا تھا کہ بشریٰ بی بی کوئی نہ کوئی ناجائز کام کروانے کیلیے خان صاحب سے فائلیں سائن کرواتی رہیں، پوسٹنگز اور ٹرانسفرز میں 10 لاکھ روزانہ ان کے اکاؤنٹس میں جاتے تھے۔


پی ٹی آئی کی منحرف رہنما نے کہا کہ جلد طاہر خورشید اور فرح گوگی وعدہ معاف گواہان بنیں گے کیونکہ اپنی جان سب کو پیاری ہوتی ہے۔ خان صاحب اور جہانگیر ترین کے درمیان مسائل کی وجہ بھی بشریٰ بی بی ہیں۔ عمران خان کے موبائل فونز بھی بشریٰ بی بی کے کنٹرول میں ہیں۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ عثمان بزدار تو کٹھ پتلی تھے، جبکہ وزیراعلیٰ پنجاب کا دفتر کرپشن کا گڑھ تھا، یہی وجہ ہے کہ علی خان کو وزیراعلیٰ نہیں بننے دیا گیا کیونکہ وہ آزادانہ فیصلے کرنے والے تھے۔
 
Advertisement

mskhan

Minister (2k+ posts)
1uzmakardarilzamaat.jpg

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کی منحرف رہنما عظمیٰ کاردار نے کہا ہے کہ عمران خان وائٹ کالر کرائم کرتے رہے، خود پیچھے رہے اور اپنے ساتھ کے لوگوں سے کرپشن کروائی۔ وہ بھی منی لانڈرنگ سے پیسا باہر بھیجتے رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان کے دور حکومت میں جتنی کرپشن ہوئی اس کا 70 فیصد حصہ بنی گالہ گیا اور 30 فیصد باقیوں کی جیبوں میں گیا۔

عظمیٰ کاردار کا کہنا تھا کہ بشریٰ بی بی کوئی نہ کوئی ناجائز کام کروانے کیلیے خان صاحب سے فائلیں سائن کرواتی رہیں، پوسٹنگز اور ٹرانسفرز میں 10 لاکھ روزانہ ان کے اکاؤنٹس میں جاتے تھے۔


پی ٹی آئی کی منحرف رہنما نے کہا کہ جلد طاہر خورشید اور فرح گوگی وعدہ معاف گواہان بنیں گے کیونکہ اپنی جان سب کو پیاری ہوتی ہے۔ خان صاحب اور جہانگیر ترین کے درمیان مسائل کی وجہ بھی بشریٰ بی بی ہیں۔ عمران خان کے موبائل فونز بھی بشریٰ بی بی کے کنٹرول میں ہیں۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ عثمان بزدار تو کٹھ پتلی تھے، جبکہ وزیراعلیٰ پنجاب کا دفتر کرپشن کا گڑھ تھا، یہی وجہ ہے کہ علی خان کو وزیراعلیٰ نہیں بننے دیا گیا کیونکہ وہ آزادانہ فیصلے کرنے والے تھے۔
Stupid woman, how worthless and shameless people can be in Pakistan is unbelievable.
 

samisam

Chief Minister (5k+ posts)
یہ جتنی بھی کھسرا ٹائپ ہوتے ہیں یہ کھسرا کار دار یا کھسرا حنا پرویز بٹ یہ سارے عورت نما کھسرے یا کھسرے نما عورتیں یہ کرپٹ لوگوں کے دلے یا دلیاں ہی کیوں بنتے ہیں
 

mpyevkiq

Citizen
محترمہ عظمیٰ حرامی کاردار صاحبہ سے میرا سوال ہے کہ آپ کو جب عمران خان کی کرپشن کی بنڈ تار آئی تو آپ نے تحریک انصاف کی سیٹ سے استعفیٰ دینے کی بجاۓ لوٹی کی طرح گھومتے ہوئے حمزہ کو ووٹ دے کر اپنے آپ کو نااہل کروانے والا بنڈ پنگا کیوں لے لیا؟
 

Gujjar1

Senator (1k+ posts)
is k liye bus yahi comment " teri pein di siri".
kazzab aur jhootey ilzam laganey wali.
IK ka aik signature 8 kror mein bikta hai usey kya parhi hai corruption ki.
 

samisam

Chief Minister (5k+ posts)
اس کھسرے کے پچھواڑے کی تار اسکے پچھواڑے میں پچیس کروڑ روپے گھسنے کے بعد آئی تھی۔ کھسرا عظمئ کار دار
 

karachiwala

Chief Minister (5k+ posts)
اس کھسرے کے پچھواڑے کی تار اسکے پچھواڑے میں پچیس کروڑ روپے گھسنے کے بعد آئی تھی۔ کھسرا عظمئ کار دار
جب تک ڈوز نا ملے یہ گونگے بہرے رہتے ہیں
 

Jhon

Politcal Worker (100+ posts)
1uzmakardarilzamaat.jpg

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کی منحرف رہنما عظمیٰ کاردار نے کہا ہے کہ عمران خان وائٹ کالر کرائم کرتے رہے، خود پیچھے رہے اور اپنے ساتھ کے لوگوں سے کرپشن کروائی۔ وہ بھی منی لانڈرنگ سے پیسا باہر بھیجتے رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان کے دور حکومت میں جتنی کرپشن ہوئی اس کا 70 فیصد حصہ بنی گالہ گیا اور 30 فیصد باقیوں کی جیبوں میں گیا۔

عظمیٰ کاردار کا کہنا تھا کہ بشریٰ بی بی کوئی نہ کوئی ناجائز کام کروانے کیلیے خان صاحب سے فائلیں سائن کرواتی رہیں، پوسٹنگز اور ٹرانسفرز میں 10 لاکھ روزانہ ان کے اکاؤنٹس میں جاتے تھے۔


پی ٹی آئی کی منحرف رہنما نے کہا کہ جلد طاہر خورشید اور فرح گوگی وعدہ معاف گواہان بنیں گے کیونکہ اپنی جان سب کو پیاری ہوتی ہے۔ خان صاحب اور جہانگیر ترین کے درمیان مسائل کی وجہ بھی بشریٰ بی بی ہیں۔ عمران خان کے موبائل فونز بھی بشریٰ بی بی کے کنٹرول میں ہیں۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ عثمان بزدار تو کٹھ پتلی تھے، جبکہ وزیراعلیٰ پنجاب کا دفتر کرپشن کا گڑھ تھا، یہی وجہ ہے کہ علی خان کو وزیراعلیٰ نہیں بننے دیا گیا کیونکہ وہ آزادانہ فیصلے کرنے والے تھے۔
Look who is talking. What garbage this lady is?
 

tahirkheli74

MPA (400+ posts)
محترمہ عظمیٰ حرامی کاردار صاحبہ سے میرا سوال ہے کہ آپ کو جب عمران خان کی کرپشن کی بنڈ تار آئی تو آپ نے تحریک انصاف کی سیٹ سے استعفیٰ دینے کی بجاۓ لوٹی کی طرح گھومتے ہوئے حمزہ کو ووٹ دے کر اپنے آپ کو نااہل کروانے والا بنڈ پنگا کیوں لے لیا؟
well responded
 

ahaseeb

Minister (2k+ posts)
She said money went to account. May be she can share any slips or accounts.

Funny they wouldn't show and when it comes to Maqsood Chaprasi no one will ever speak about it
 
Sponsored Link