مریم آڈیومیں غیرقانونی بات ہےتو تحقیقات ہونی چاہیے،شاہدخاقان

marya1221.jpg


مسلم لیگ ن کے سینئر رہنما اور سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ اگر مریم نواز شریف کی منظر عام پر آنے والی ویڈیو میں کوئی غیر قانونی بات ہے تو ضرور ان کے خلاف کارروائی ہونی چاہیے۔

نجی خبررساں ادارے سماء نیوز کے پروگرام "لائیو ود ندیم ملک" میں خصوصی گفتگو کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی نے آڈیوز اور ویڈیوز لیک ہونا ملک کی بدقسمتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ مریم نواز کی آڈیو ہو یا لاہور کے حلقہ این اے 131 میں ووٹوں کی خرید وفروٹ کی ویڈیو جس میں بھی قانون شکنی نظر آرہی ہے اس پر کارروائی ہونی چاہیے۔


شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ ہم نے کبھی بھی ووٹ نہیں خریدا ، نہ ہی ہم نے جج ارشد ملک کی ٹیلی فون کالز ریکارڈ کیں، فون کالز ریکارڈ کرنا غیر قانونی عمل ہے۔

سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ چیئرمین نیب جسٹس (ر ) جاوید اقبال کی ویڈیو ہمارے پاس کچھ لوگ لے کر آئے تھے، ہمارے کابینہ اجلاسوں جاری ہوتے تھے کہ خبریں باہر نکل جاتی تھیں جس کی روک تھام کے اقدامات کرنے کیلئے ہم نے جیمرز لگائے۔

انہوں نے کہ اپوزیشن جماعتوں نے اکھٹا ہوکر جو اتحاد قائم کیا اس کا مقصد ملک کے نظام کو آئین کے مطابق کرنا ہے ہم اس پلیٹ فارم سے6 دسمبر تک اسمبلیوں سے استعفوں یا لانگ مارچ کے حوالے سے فیصلہ کرلیں گے۔
 
Advertisement

The Sane

Chief Minister (5k+ posts)
marya1221.jpg


مسلم لیگ ن کے سینئر رہنما اور سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ اگر مریم نواز شریف کی منظر عام پر آنے والی ویڈیو میں کوئی غیر قانونی بات ہے تو ضرور ان کے خلاف کارروائی ہونی چاہیے۔

نجی خبررساں ادارے سماء نیوز کے پروگرام "لائیو ود ندیم ملک" میں خصوصی گفتگو کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی نے آڈیوز اور ویڈیوز لیک ہونا ملک کی بدقسمتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ مریم نواز کی آڈیو ہو یا لاہور کے حلقہ این اے 131 میں ووٹوں کی خرید وفروٹ کی ویڈیو جس میں بھی قانون شکنی نظر آرہی ہے اس پر کارروائی ہونی چاہیے۔


شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ ہم نے کبھی بھی ووٹ نہیں خریدا ، نہ ہی ہم نے جج ارشد ملک کی ٹیلی فون کالز ریکارڈ کیں، فون کالز ریکارڈ کرنا غیر قانونی عمل ہے۔

سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ چیئرمین نیب جسٹس (ر ) جاوید اقبال کی ویڈیو ہمارے پاس کچھ لوگ لے کر آئے تھے، ہمارے کابینہ اجلاسوں جاری ہوتے تھے کہ خبریں باہر نکل جاتی تھیں جس کی روک تھام کے اقدامات کرنے کیلئے ہم نے جیمرز لگائے۔

انہوں نے کہ اپوزیشن جماعتوں نے اکھٹا ہوکر جو اتحاد قائم کیا اس کا مقصد ملک کے نظام کو آئین کے مطابق کرنا ہے ہم اس پلیٹ فارم سے6 دسمبر تک اسمبلیوں سے استعفوں یا لانگ مارچ کے حوالے سے فیصلہ کرلیں گے۔
گھر کے گیراج میں چکلہ چلانے والی، اور نو مہینے کا کام چار میں کرنے والی کھپتی رن کو ایک آدھ آڈیو کےُلیک ہونے سے فرق ہی کیا پڑتا ہے۔
باقی تیرے پاجامی کا کچھ پتہ چلا، بُو بکرے؟
 

The Sane

Chief Minister (5k+ posts)
Beware, Maryam's Audios could be a trap to pull PTI and its crackhead leadership into a dirty game of blue prints including the one who got shot on bare chest and the one who slipped while drunk in Mali 🤣

ImranKhanwaspicturedrelaxingatGodrejbunglowatJuhu%2CMumbaiin2007..jpg

The Sane

If you stretched Khan’s photo a bit longer, I can assure you would find Maryam Gashti busy dining through his pair of Bermuda.
 
Sponsored Link