مفتی عزیز 3 سال تک ہر ہفتے متاثرہ شخص سے زیادتی کرتا رہا، پولیس چالان

exported-mufti-aziz.jpg


لاہور کے مدرسے میں بدفعلی کے معاملے پر پولیس کا چالان منظر عامر پر آ گیا ہے جس میں ہولناک قسم کے انکشافات سامنے آئے ہیں۔

پولیس نے انکشاف کیا ہے کہ ملزم مفتی عزیز الرحمان 3 سال تک ہر ہفتے متاثرہ شخص کو زیادتی کا نشانہ بناتا رہا ہے۔ ملزم نے وفاق المدارس میں اپنے اثر ورسوخ کی بنا کر طالبعلم کو بدفعلی پر راضی کیا تھا۔


پولیس نے اپنے چالان میں عزیز الرحمان سمیت 3 بیٹوں کو بھی ملزم نامزد کیا ہے اور مقدمے کے ٹرائل میں 9 افراد کو بطور گواہ عدالت پیش کیا جائے گا۔ چالان کے مطابق ملزم عزیز الرحمان نے طالبعلم کو متعدد بار زیادتی کا نشانہ بنایا۔ متاثرہ طالبعلم نے آڈیو اور ویڈیو ریکارڈنگ کی تھی جس سے ثابت ہوا کہ ویڈیو میں موجود صوفے اور پردے ملزم کے کمرے سے مماثلت رکھتے ہیں۔

یاد رہے کہ منظر عام پر آنے والی آڈیو اور ویڈیوز کی بنیاد پر جامعہ منظور اسلامیہ نے ملزم کو اس کے عہدے سے الگ کر دیا تھا۔ جبکہ ملزم کے تینوں بیٹے متاثرہ طالب علم کو سنگین نتائج کی دھمکیاں دیتے رہے ہیں۔ ملزم نے دوران تفتیش بدفعلی کا اعتراف کیا اور بتایا کہ وہ اس جرم کا مرتکب ہوا ہے۔


مقدمے کے دیگر ملزمان (عزیزالرحمان کے بیٹے) مدعی کو جان سے مارنے کی دھمکیاں دینے کی حد تک قصور وار پائے گئے۔ پولیس نے چالان میں عدالت سے استدعا کی ہے کہ ملزمان کے خلاف تمام 9 گواہوں کو طلب کر کے ٹرائل شروع کیا جائے۔

 
Advertisement
Last edited by a moderator:

Terminator;

MPA (400+ posts)
مفتی عزیز الرحمٰن اَل لو طی حرامزادہ بس ایویں جُگالی کی لَت میں پڑا ہؤا تھا
راکھ کے ڈھیر میں شعلہ ہے، نہ چنگاری ہے ۔ ۔ ۔ ڈی این اے رپورٹ
 

Khallas

Chief Minister (5k+ posts)
Wahh mufti, umer dekh tangain teri qabar main aur luli abhi tak phudakti the.

Soch jab qayamt k din tu qoom-e-loud k sath uthaya jaye ga.

Teri in harkaton ki waja say aj log Mufti or Molvi ki izaat nahin kartay.
 
Sponsored Link