ملک مہنگائی کا شکار ہے اور حکومت خاتون صحافی کی کردارکشی میں مصروف،بلاول

9bilawalasma.jpg

چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری نے گزشتہ دنوں سوشل میڈیا پر سینئر صحافی و اینکر پرسن عاصمہ شیرازی کے خلاف سوشل میڈیا پر ہوئی تنقید کی مذمت کردی ہے۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق چیئرمین پیپلزپارٹی نے کہا ہے کہ ملک تاریخ کی بدترین مہنگائی کا شکار ہے مگر حکومت ایک خاتون صحافی کی کردار کشی کی مہم میں مصروف ہے۔


ترجمان پیپلزپارٹی کے مطابق بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ پوری صحافی برادری عاصمہ شیرازی کے ساتھ کھڑی ہے، حکومت کو ہوش کے ناخن لینے چاہیے عاصمہ شیرازی کا معاملہ انفرادی نہیں ہے، اختلاف رائے کو کچلنا موجودہ حکومت کا ایک عمومی رویہ بن چکا ہے۔


انہوں نے مزید کہا کہ عوامی مسائل کے حل کے بجائے صحافیوں پر ایسے حملوں کا مطلب ہے کہ حکومت کے پاس بحرانوں کا کوئی حل نہیں ہے، موجودہ حکومت سچ سے خوفزدہ ہے۔

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ حکومت دھونس اور دھمکی سے عوام کے حق میں اٹھنے والی آوازوں کو دبانے کی کوشش کررہی ہے۔
 
Advertisement

Terminator;

Senator (1k+ posts)
ویسے یہ خسرہ ہے بڑے دل والا ۔ ۔ ۔ ۔
عمرانی پچھلے کئی سالوں سے اس خُسرے کی کردار کشی کر رہے ہیں، لیکن
یہ خسرہ کبھی بولا نہیں،،، لیکن گنج پوری کتّی پر پتھر مارنے سے اسے بڑی تکلیف ہوئی
 

NasNY

Chief Minister (5k+ posts)
Is ko kuch khatay bhee sharm ati hai

Zardari kay jany kay badd is ka bohat bura hall ho ga
 

Okara

Prime Minister (20k+ posts)
If all journalists are supporting Asima then the ones barking will be supporting her too?
 

Talisman

MPA (400+ posts)
9bilawalasma.jpg

چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری نے گزشتہ دنوں سوشل میڈیا پر سینئر صحافی و اینکر پرسن عاصمہ شیرازی کے خلاف سوشل میڈیا پر ہوئی تنقید کی مذمت کردی ہے۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق چیئرمین پیپلزپارٹی نے کہا ہے کہ ملک تاریخ کی بدترین مہنگائی کا شکار ہے مگر حکومت ایک خاتون صحافی کی کردار کشی کی مہم میں مصروف ہے۔


ترجمان پیپلزپارٹی کے مطابق بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ پوری صحافی برادری عاصمہ شیرازی کے ساتھ کھڑی ہے، حکومت کو ہوش کے ناخن لینے چاہیے عاصمہ شیرازی کا معاملہ انفرادی نہیں ہے، اختلاف رائے کو کچلنا موجودہ حکومت کا ایک عمومی رویہ بن چکا ہے۔


انہوں نے مزید کہا کہ عوامی مسائل کے حل کے بجائے صحافیوں پر ایسے حملوں کا مطلب ہے کہ حکومت کے پاس بحرانوں کا کوئی حل نہیں ہے، موجودہ حکومت سچ سے خوفزدہ ہے۔

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ حکومت دھونس اور دھمکی سے عوام کے حق میں اٹھنے والی آوازوں کو دبانے کی کوشش کررہی ہے۔
Jubb..Gul Khan Ata hai, May Ra pani Nikell..Jataa..Hai.. Gay boy.
 

amber123

Chief Minister (5k+ posts)
تم کو تو خوش ہونا چاہیے کیونکہ حکومت ان کے خلاف بول رہی ہے جن کو تم کتے قرار دیتے ہو۔
دوسری بات یہ ہے کہ تم بھول گے ہو کہ تمہارں اپنی ماں کو ان لوگوں نے ہی نشانے پر رکھا ہوا ہے۔ دولت اور اقتدار کا نشہ کافی گھما دیتا ہے
 
Sponsored Link