نواز شریف نےاپنے پسندیدہ کباب فروش کو سرکاری دورے پرترکی سے پاکستان بلایا ؟

nawi111h1.jpg

ترکی میں سابق پاکستانی سفیر نے انکشاف کیا ہے کہ میاں نواز شریف نے اپنے دور حکومت میں ترکی سے اپنے پسندیدہ کبابی کو ایک ہفتے کیلئے سرکاری دورے پر پاکستان بلایا تھا۔

آن لائن خبررساں ادارے نیوز ہنٹ میں گفتگو کرتے ہوئے ترکی میں پاکستان کے سابق سفیر نے ایک دلچسپ قصہ بتاتے ہوئے کہا کہ میں نے ترکی میں اپنے سفارتی دور کے دوران نواز شریف کو ان کے پسندیدہ کباب نہیں کھانے دیئے تھے۔

سابق پاکستان سفیر نے بتایا کہ1999 میں ترکی میں خوفناک زلزلہ آیا تھا جس میں 40 سے50 ہزار لوگ لقمہ اجل بن گئے تھے، زلزلے کے تیسرے دن اس وقت کے وزیر خارجہ سرتاج عزیز نے کہا کہ وزیراعظم نواز شریف تعزیت کیلئے ترکی آنا چاہتے ہیں، میں نے ایک ہفتے بعد ترک حکام سے بات کرکے دورہ فائنل کروادیا۔

انہوں نےکہا کہ وزیراعظم صاحب آگئے اور زلزلہ سے متاثرہ علاقوں کا دورہ کیا،استنبول میں شام کو نواز شریف نے کہا کہ کباب کھانے چلتے ہیں، استنبول میں ایک کبابی تھا جس کے کباب میاں صاحب کو پسند تھے اور وہ اکثر اس کے کباب کھایا کرتے تھے، میاں صاحب کو اس کے کباب اتنے پسند تھے کہ انہوں نے اس کبابی کو ایک بار 1 ہفتے کیلئے سرکاری دورے پر پاکستان بھی بلوایا تھا۔

سابق سفیر نے کہا کہ میں نے میاں صاحب کو منع کیا کہ آپ تعزیت کیلئے آئے ہیں لہذا آپ کا باہر کباب کھانے کیلئے جانا غیر مناسب ہے، میاں صاحب نے کہا کہ پھر کباب یہاں منگوا لو، میں نے اس پر بھی منع کیا تو میاں صاحب کا منہ لٹک گیا۔

انہوں نے کہا کہ اگلے روز انقرہ جاتے ہوئے میاں صاحب کیلئے جہا ز میں ان کبابوں کو پہنچایا گیا، فلائٹ کے اڑتے ہی میاں صاحب نے کباب منگوائے اور اس سے پورا پورا انصاف کیا، انقرہ میں صدر نے وزیراعظم کیلئے ظہرانے کا بھی بندوبست کیا ہوا تھا میاں صاحب نے کبابوں سے اپنا پیٹ بھرنے کے باوجود ظہرانے میں ٹھیک کھانا کھایا۔
 
Advertisement

Dr Adam

Prime Minister (20k+ posts)

آدھی روٹی کا قرض

اللہ اکبر بیوی بار بار ماں پر الزام لگائے جا رہی تھی اورشوہر بار بار اسکو اپنی حد میں رہنے کا کہہ رہا تھا۔ لیکن بیوی چپ ہونے کا نام ہی نہیں لے رہی تھی بار بار زور زور سے چیخ چیخ کر کہہ رہی تھی۔ کہ اس نے انگوٹھی ٹیبل پر ہی رکھی تھی اور تمهارے اور میرے علاوہ اس کمرے میں کوئی نہیں آیا۔

انگوٹھی ہو نا ہو ماں جی نے ہی اٹھائی ہے. بات جب شوہر کی برداشت سے باہر ہو گئی تو اس نے بیوی کے گال پر ایک زور دار طمانچہ دے مارا. ابھی تین ماہ پہلے ہی تو شادی ہوئی تھی، بیوی سے طمانچہ برداشت نہ ہوا وہ گھر چھوڑ کر جانے لگی اور جاتے جاتے شوہر سے ایک سوال پوچھا کہ تمھیں اپنی ماں پر اتنا یقین کیوں ہے؟ تب شوہر نے جو جواب دیا اس جواب کو سن کردروازے کے پیچھے کھڑی ماں نے سنا تواس کا دل بھر آیا۔ شوہر نے بیوی کو بتایا کہ جب وہ چھوٹا تھا تب اس کے والد الله کو پیارے ہو گئے. ماں محلے کے گھروں میں جھاڑو پوچا لگا کر جو کما پاتی تھی اس سے ایک وقت کا کھانا آتا تھا. ماں ایک پلیٹ میں مجھے روٹی دیتی تھی اورخالی ٹوکری ڈھک كر رکھ دیتی تھی اور کہتی تھی میری روٹیاں اس ٹوکری میں ہیں بیٹا تو کھا لے. میں بھی ہمیشہ آدھی روٹی کھا کر کہہ دیتا تھا کہ ماں میرا پیٹ بھر گیا ہے مجھے اور نہیں کھانا ہے۔ ماں نے مجھے میری جوٹھی آدھی روٹی کھا کر پالا پوسا اور بڑا کیا ہے۔ آج میں دو روٹی کمانے کے قابل ہوا ہوں لیکن یہ کیسے بھول سکتا ہوں کہ ماں نے عمر کے اس حصے پر اپنی خواہشات کو مارا ہے۔ وہ ماں آج عمر کے اس حصے پر کیسے انگوٹھی کی بھوکی ہو گی۔ یہ میں سوچ بھی نہیں سکتا آپ تو تین ماہ سے میرے ساتھ ہو میں نے تو ماں کی تپسیا کو گزشتہ پچیس سالوں سے دیکھا ہے یہ سن کر ماں کی آنکھوں سے آنسو چھلک اٹھے۔ وہ سمجھ نہیں پا رہی تھی کہ بیٹا اس کی آدھی روٹی کا قرض چکا رہا ہے یا وہ بیٹے کی آدھی روٹی کا قرض۔


ماخوز
 

samisam

Chief Minister (5k+ posts)
اس حرام زادے چور فراڈئے لعنتی بے غیرت نطفہ حرام منی لانڈر خنزیر اورمودی کے پالتو کتے کی دوستی جرنیلوں کے سات رل مل کر حرام کھانے کی وجہ سے ہے یہ حرام زادہ فراڈیا خود بھی کھاتا ہے اور کچھ نطفہ حرام کرپٹ جرنیلوں کو ہڈی بھئ ڈال کر ان کو اپنا پالتو کتا بنا لیتا ہے
 

Arshak

Minister (2k+ posts)
Parchi Sharif is one of the biggest fraudster.This dakoo is not good enough to be councillor.He was imposed on Pakistan by Gen Zia.Pakistan has been ruined by this duffer,
 
Sponsored Link