کیا وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال آج اپنی حکومت بچاپائیں گے؟

jam-kamal-no-confidance-121.jpg


وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان کے خلاف تحریک عدم اعتماد آج پیش کی جائے گی۔ناراض اراکین کا 40 اراکین کی حمایت کا دعویٰ

نجی چینل کے مطابق بلوچستان اسمبلی کا اجلاس آج سہ پہر 4 بجے ہوگا جس میں وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان کے خلاف تحریک عدم اعتماد آج پیش کی جائے گی۔تحریک عدم اعتماد بلوچستان عوامی پارٹی کے ناراض ارکان اسمبلی پیش کریں گے ۔

تحریک عدم اعتماد پر 14 اراکین نے دستخط کئے جبکہ وزیر اعلیٰ جام کمال کے خلاف عدم اعتماد کی تحریک کی کامیابی کے لیے 33 ووٹ درکار ہیں۔


دوسری جانب بلوچستان کے ناراض اور اپوزیشن جماعتوں کے اراکین کے اجلاس میں ناراض اراکین نے اکثریت واضح کر دی۔اسپیکر عبدالقدوس بزنجو کے عشائیہ میں 36 اراکین اسمبلی نے شرکت کی۔

ناراض اور اپوزیشن اراکین کا میڈیا سے بات کرتے ہوئے دعویٰ ہے کہ انہیں65 کے ایوان میں 40اراکین کی حمایت حاصل ہے، جام کمال کے پاس اب بھی وقت ہے وہ باعزت طور پر مستعفی ہوجائیں وزیراعلیٰ کے خلاف اراکین کی تعداد 40سے بھی زیادہ بڑھ سکتی ہے۔

جے یو آئی ف کے پارلیمانی لیڈر سکندر ایڈووکیٹ نے اس موقع پر کہا کہ وہ تحریک عدم اعتماد کی حمایت کرتے ہیں، وزیر اعلیٰ جام کمال فوری مستعفی ہو جائیں۔

دوسری طرف وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال اپنے مؤقف پر قائم ہیں، انھوں نے ایک بیان میں کہا کہ اپوزیشن کے چند ممبران اپنے عزائم میں کامیاب نہیں ہوں گے، مخالفین کا اصل مقصد بلوچستان کو تباہی کی طرف لے جانا ہے۔
 
Advertisement
Sponsored Link