گزشتہ24گھنٹوں میں پاکستانی میڈیا کا کردار کیا رہا؟ اظہر مشوانی کاپوسٹمارٹم

2mediaazharmashwani.jpg

وزیراعلیٰ پنجاب کے فوکل پرسن برائے ڈیجیٹل میڈیا اسٹریٹیجی اظہر مشوانی نے پاکستانی میڈیا کے کردار کو ہدف تنقید بنا کر بتایا کہ گزشتہ 24 گھنٹوں میں میڈیا نے کونسا تعمیری کردار نبھایا ہے۔

اظہر مشوانی نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر لکھا کہ پاکستانی میڈیا نے پچھلے 24 گھنٹوں کے دوران یہ 3 کام کیے ہیں۔


ایک سینئر صحافی نے ایف اے ٹی ایف سے متعلق بھارتی پروپیگنڈا پروموٹ کیا۔ ان کا اشارہ عاصمہ شیرازی کی طرف تھاجنہوں نے پاکستان کے ایف اے ٹی ایف کی بلیک لسٹ میں جانے سے متعلق ایک بھارتی تھنک ٹینک کا لنک شیئر کیا تھا اور حکومت پر تنقید کرتے ہوئے کہا تھا پاکستان بلیک لسٹ میں جا رہا ہے اس کا زمہ دار کون ہو گا؟

FLy-aURXEAQDtHH


واضح رہے کہ بین الاقوامی شہرت یافتہ صحافی مائیکل کگل مین جو پاکستانیوں پالیسیوں کے ناقد بھی ہیں نے بھارتی پراپیگنڈے کو جھوٹ قرار دیا اور کہا کہ پاکستان کے بلیک لسٹ میں جانے کا کوئی چانس نہیں۔

FLy-arAWUAoEnHK


اظہر نے میڈیا کے دوسرے کارنامے کو ہائی لائٹ کرتے ہوئے کہا کہ جیو نیوز اور ڈان نیوز نے ترجمان وزارت خزانہ مزمل اسلم سے منسوب جعلی ٹوئٹس کو خبروں کے طور پر پیش کیا۔ واضح رہے کی مزمل اسلم نےگزشتہ روز اپنے نام سے منسوب جعلی اکاؤنٹ کی نشاندہی کر دی تھی مگر اس کے باوجود ڈان نیوز پیپر نے آج کے اخبار جعلی ٹوئٹ پر خبر چھاپ دی۔




انہوں نے کہا کہ اگرآپ ان سے سوال کریں گے تو آپ کو پیسے لیکر ٹرول کرنے والوں میں شمار کیا جائے گا، کیونکہ صحافت کیا ہوتی ہے یہ ان کو کسی سے سیکھنے کی ضرورت نہیں ہے۔
 
Advertisement

Sar phra Dewanah

MPA (400+ posts)

پاکستان جیسا مادر پدر آزاد میڈیا پوری دنیا میں نہیں ملتا . میڈیا ایک بدمعاش اور بلیک میلر کا روپ دھار چکا ہے . سزا اور جزا کے بغیر اس بد معاش کو قابو کرنا نہایت مشکل ہو گا​

 
Sponsored Link