سیالکوٹ کے افسوسناک واقعہ پر سوشل میڈیا صارفین پھٹ پڑے،صارفین کا ردعمل

sirilanka.jpg


سیالکوٹ میں غیر ملکی فیکٹری مینجر کو توہین مذہب کا الزام لگاکر قتل کرنے کے معاملے پر سوشل میڈیا صارفین پھٹ پڑے ہیں۔

مائیکروبلاگنگ ویب سائٹ ٹویٹر پر "سیالکوٹ" ابھی بھی ٹرینڈ کررہا ہے، واقعے کے بعد سیاستدانوں، صحافی برادری اور ہر شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے افراد نے شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے ذمہ دار افراد کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا ہے۔

سینئر صحافی و تجزیہ کار ضرار کھوڑو نے اپنی ٹویٹ میں کہا کہ سیالکوٹ کے واقعہ پر حیران ہونے کی ضرورت نہیں ہے، مذہب کے نام پر ایسے واقعات کو جائز قرار دینے کا یہ فطر ی اور منطقی نتیجہ ہے، ریاست کی جانب سے بار بار جھکنے کا شکریہ۔


صدیق جان نے کہا کہ وقت آگیا ہے کہ راتوں کو بھی عدالتیں لگانی پڑیں تو لگائیں اور سیالکوٹ واقعے کے ذمہ داران کو جلد از جلد پھانسی پر لٹکائیں۔


امبرین نامی صارف نے سوال کیا کہ کسی بھی ایک مذہبی جماعت کے سربراہ کی جانب سے اس واقعے کی مذمت نہیں کی گئی ہوگی، جب ٹی ایل پی کی جانب سے 8 پولیس والے مارے گئے تب تمام مذہبی جماعتیں ان کے ساتھ کھڑی تھیں۔


نائمہ نے کہا کہ مسلمان ہونے کیلئے کلمہ گو ہونے کے ساتھ دو جہاں کے رحمت العالمین والے اخلاقِ حسنہ، غیر مسلموں کیساتھ سلوک، رواداری جیسی صفات بھی خود میں پیدا کرنی ہوتی ہیں۔


ایک اور صارف نے کہا کہ اگر آج کے واقعہ درست ہے تو تمام اخبارات کے مالکان بھی واجب القتل ہیں کیونکہ وہ اخبارات میں قرآنی آیات اور احادیث شائع کرتے ہیں اور بعد میں یہی اخبارات استغراللہ کوڑے کے ڈھیر میں پڑے ہوتے ہیں۔


اکبر نامی صارف نے کہا کہجو قوم اپنے اندر موجود کمزوروں اور اقلیتوں پر ظلم کرتی ہے وہ کبھی سکون میں نہیں رہ سکتی اللہ اس پر کبھی رحم نہیں کرسکتا وہ عذاب میں ہی رہے گی، ایسے جرائم ملک سے غداری کے مترادف ہیں۔


ایک اور صارف نے کہا کہ کسی ملازم کی غلطی پر سرزنش نہ کریں ورنہ اس کے اندر کا عاشق جاگ جائے گا اور آپ پر لگا گستاخ کا لیبل آپ کی نسلیں بھگتیں گی۔


راؤ زاہد نے کہا کہ سری لنکا کی ٹیم پر پاکستان میں حملہ ہوا مگر سری لنکا کی ہی پہلی ٹیم تھی جس نے پاکستان میں دوبارہ کرکٹ کھیلی، آج جو سری لنکن باشندے کے ساتھ ہوا اس پر ہر پاکستانی کو شرمندہ ہونا چاہیے۔


تقویم احسن نے لکھا کہ جاہل لکھا ۔مٹا دیا،جانور لکھا مٹا دیا ۔حیوان لکھا مٹا دیا۔درندے لکھا مٹا دیا۔جہنمی لکھا مٹا دیا۔تمہیں کیا لکھوں ۔تم یہ سب کچھ اور بہت کچھ ہی تو ہو۔نہیں ہوتو انسان نہیں ہو۔


سید عامر علی نے دعا کی اور کہا کہ اللّٰہ پاک پاکستان کو شدت پسندوں سے محفوظ رکھے،اور پاکستان کو دنیا میں بدنام ہونےسے بچائے،


عقیل شیخ نامی ایک صارف نے مقتول سری لنکن باشندے کی تصویر شیئر کی اور کہا کہ یہ شخص میرے گاؤں کی چار بہنوں کو چھوڑنے آتا تھا کہ کوئی انہیں نقصان نہ پہنچا دے مگر اسے معلوم نہیں تھا کہ جن سے بچا رہا ہے یہی ایک دن اس کی جان لے لیں گے۔


 
Advertisement

Wakeel

MPA (400+ posts)
سرے عام پھانسی کے علاوہ کوئی سزا نہیں ہونی چاہیے ان حرامیوں کی۔۔
 

saqibmkhan

Councller (250+ posts)
I personally believe that it was the premeditated murder of the Sri Lankan man and the abrupt eruption of violent emotions that compelled the mob to murder and then burn the man alive. It is so horrendous even to imagine the events leading to this horrific tragedy. It was as horrible and sadistic in nature as was the killings of four policemen by TLP terrorists in October 2021.

It is a widely acknowledged fact that terrorists or people of violence and hate do not act on the spur of the moment but have an embedded rage, grudge, or hate against some they consider as enemies, aggressors, and oppressors who have illegally occupied their lands, suppressed their liberty, civil rights, killed their mothers, fathers, brothers, sisters, humiliated them for too long by denying them the right to live in total freedom as an independent people in their homeland so ruthless illegally occupied by the enemies.

It is this feeling of humiliation, intimidation, illegal occupation of their lands, suffering of stomach-churning atrocities and barbarities that their people suffered at the hand of the occupiers of their lands that make them feel terribly aggrieved and turn into monsters in revenge.
But, what motivated the monsters against the poor Sri Lankan man yesterday in Sialkot was not the sudden abruption of hate or victimization but something more sinister that needs to be fully investigated by the authorities and steps taken to suppress it ever happening again in Pakistan.
 

ranaji

President (40k+ posts)
اب حکومت ،اپوزیشن ، عوام باجوہ کورکمانڈرز ، ججز پولیس شرم شرم کا کھیل بند کرو اور ان حرام زادوں کو عبرت کا نشان بناؤ یہ سب شرم اور شرمندگی اور افسوس وڑ گیا ان زحرام زادوں کے پچھواڑوں میں اب ان سور کے بچوں کے خاندانوں کو شرم شرم کا کھیل شروع کراؤ پوری دنیا میں پاکستان کو زلیل کرنے کرکے رکھ دیا انسانیت اسلام اور پاکستان کی شرمندگی تو بہت چھوٹے الفاظ ہیں کسی بھی سری لنکن سے بات کرکے دیکھو وہ نفرت میں بھرے بیٹھے ہیں پاکستان اور اسلام سے جو کل تک پاکستان سے پیار کرتے تھے یہاں یو کے میں ہمارے لنکن کو لیگ تک نفرت کا اظہار کر رہے ہیں نہ صرف پاکستان سے بلکہ اسلام سے بھی اب کوئی حرام زادہ جج ان کو۔ چھوڑ دے گا یا ماتحت عدالت سے دی ہوئی سزا کم کردے گا پاکستان کے جج تو ساری دنیا میں مشہور ہیں پیسے کے لئے اپنی ماں بھی بیچ دیتے ہیں
انکے لئے ایک آرڈنسس لاؤ ایک سپیشل سپیڈ ی کورٹ بنا ؤ ملٹری کورٹس بناؤ اور سزائے موت دو موجودہ عدالتی نظام ان کو سزا ہی نہیں دے گا ان حرام زادوں سور کے بچوں کو سزا دو فوری سزا دو

اگر نہیں کر سکتے تو یہ شرم شرم کا کھیل بند کردو بہت تماشہ ہوگیا حکومت چھوڑ دو اگر مجرموں کو سزا بھی نہیں دلا سکتے عدالتیں بند کرا دو اور جنگل کا قانون بنا دو
جو انٹر نیشنل ڈیمیج ہوا ہے پاکستان۔ پاکستان میں رہنے والے وہ تصور بھی نہیں کر سکتے
فوری سزا کافی حد تک ڈیمیج کنٹرول کر دے گو اب سارے کھیل تماشے بند کرکے ان حرام زادوں سور کو بچو ں کو سزا دو افسوس شرم یہ وہ وہ یہ سب ڈرامے ہیں
 

mian_ssg

MPA (400+ posts)
Sialkot incident is ugly and the state should deal it with iron fist. Root cause analysis is also necessary to eradicate the problem.
  1. People don't trust the judicial system, restore their faith in it by punishing these criminals and all the other including everyone who is responsible for this mess starting from establishment, journalists, judges, politicians and all with zero tolerance.
  2. Our nation is mostly illiterate, educate and train them with the true spirit of Islam.
  3. A society can survive with "Kuffar" but not with injustice.
 

Landmark

Minister (2k+ posts)
Sialkot incident is ugly and the state should deal it with iron fist. Root cause analysis is also necessary to eradicate the problem.
  1. People don't trust the judicial system, restore their faith in it by punishing these criminals and all the other including everyone who is responsible for this mess starting from establishment, journalists, judges, politicians and all with zero tolerance.
  2. Our nation is mostly illiterate, educate and train them with the true spirit of Islam.
  3. A society can survive with "Kuffar" but not with injustice.

start it from here

agr mar ke bchy youthey hu tu

tum kuteu ke bchy U TURN le leye hu

principles pr

 
Last edited:
Sponsored Link