فنڈنگ کیس میں ایف آئی اے کا نوٹس، عمران خان کا جواب دینے سے انکار

4imrankhanFIAnotice.jpg

وفاقی تحقیقاتی ادارے نے فارن فنڈنگ سے متعلق تحقیقات میں سابق وزیراعظم عمران خان کو نوٹس ارسال کیا ہے جس پر ردعمل میں عمران خان نے اس کا جواب دینے سے انکار کر دیا ہے۔

ایف آئی اے نوٹس پر عمران خان نے تحریری ردعمل دیا ہے، نوٹس کا جواب سابق اٹارنی جنرل انور منصورخان کی جانب سے لکھا گیا ہے جس میں مؤقف اختیار کیا گیا ہے کہ عمران خان کو بھیجا گیا نوٹس ایف آئی اے کی بدنیتی پر مبنی ہے۔

نوٹس پر جواب ایف آئی اے کمرشل بینک سرکل، اسلام آباد کی ڈپٹی ڈائریکٹر آمنہ بیگ کو بھیجا گیا ہے۔ جوابی خط میں کہا گیا ہے کہ پی ٹی آئی سے تفصیلات اور دستاویزات طلب کرنا ایف آئی اے کے زیراثر ہونے کی نشاندہی کرتا ہے، الیکشن کمشن نے ابھی تک کوئی فیصلہ نہیں دیا بلکہ رپورٹ جاری کی۔


جواب میں کہا گیا ہے کہ الیکشن کمشن ایف آئی اے یا کسی اور ادارے کو اس رپورٹ کی بنیاد پر حکم جاری نہیں کرسکتا، ایف آئی اے کے پاس پولیٹیکل پارٹیز آرڈر2002 کے تحت کارروائی کرنے کا اختیار نہیں.

جواب میں مزید کہا گیا کہ جاری کیا گیا نوٹس ایف آئی اے ایکٹ سے بھی متصادم ہے، سپریم کورٹ متعدد فیصلوں میں الیکشن کمشن کو انتظامی ادارہ قرار دے چکی ہے، الیکشن کمشن عدالت ہے نہ ہی ٹریبونل اس لیے اپنی حد سے تجاوز نہ کریں۔

یاد رہے کہ ایف آئی اے کمرشل بینک سرکل نے سابق وزیراعظم اور چیئرمین تحریک انصاف عمران خان سے فارن فنڈنگ کیس میں تحقیقات کیلئے بینک اکاﺅنٹس سے متعلق تفصیلات طلب کی تھیں.
 
Sponsored Link