فیصلہ یہ ہےکہ حمزہ سے وزیراعلی کا دفتر لےکر کل واپس کر دیا جائے:اعتزاز احسن

aitzaz-ahsan-hamza-cm-lhc.jpg


سینئر قانون دان اور سیاستدان اعتزاز احسن نے کہا ہے کہ لاہور ہائی کورٹ نے فیصلہ دیا ہے کہ حمزہ شہباز شریف سے وزارت اعلی کا دفتر لے کر کل واپس کردیا جائے۔


تفصیلات کے مطابق اعتزازاحسن نے یہ گفتگو اے آروائی نیوز کے پروگرام آف دی ریکارڈمیں خصوصی انٹرویو دیتے ہوئے کی ، پروگرام کے میزبان سینئر صحافی و اینکر پرسن کاشف عباسی نے ان سے لاہور ہائی کورٹ کے حمزہ شہباز شریف کے بطور وزیرا علی انتخاب کےسے متعلق فیصلے کے حوالے سے سوال کیا۔

اعتزازاحسن نے جواب دیا کہ اس فیصلے کے دو حصے ہیں، پہلے حصے میں کہا گیا ہے حمزہ شہباز شریف سے وزیراعلی پنجاب کا آفس لے لیا جائے، اور دوسرے حصے میں کہا گیا ہے کہ کل حمزہ شہباز شریف کو وزیراعلی پنجاب کا آفس دیدیا جائے۔


اعتزازاحسن نے کہا کہ جس طرح فیصلے میں وقت کا تعین کیا گیایہ نہیں ہوسکتا اس طرح، انصاف تو نظر آنا چاہیے ، چاہے وہ تحریک انصاف کے ساتھ ہو۔

سینئر قانون دان نے کہا کہ ہم ان عدالتوں سے اتنا ہمارا اختلاف ہوتا رہا ہے، آپ دیکھیں کہ 1993 میں اسمبلی کی بحالی کے حوالے نواز شریف کے حق میں عدالت کا فیصلہ آتا ہے،اسی بنیاد پر جب بی بی شہید کی اسمبلی توڑی جاتی ہے توعدالت ان کی پٹیشن ہی نہیں لیتی۔

واضح رہے کہ لاہور ہائی کورٹ نے حمزہ شہباز شریف کے بطور وزیراعلی انتخاب کو کالعدم قرار دیتے ہوئے دوبارہ گنتی کا حکم دیدیا ہے،فیصلے میں کہا گیا ہے کہ 25 منحرف اراکین کو نکال کر اراکین کی دوبارہ گنتی کی جائے، جس کی اکثریت وہ جیت جائے گا۔
 
Advertisement
Last edited:

thinking

Prime Minister (20k+ posts)
LHC declared laod and clear that Hamza is CM of LHC..not CM of Panjab..
Same as SC.CJ.Bandial declared that SC PM is Showbaz..
Maine kabhi itni khuli favor nahi dekhi judges ki traf se.
 

cheetah

Minister (2k+ posts)
Just forget soft revolution by elections. Only possible option left is bloody revolution full scale bloody revolution where the corrupt mafias should be hanged publicly without trials.
 

thinking

Prime Minister (20k+ posts)
Just forget soft revolution by elections. Only possible option left is bloody revolution full scale bloody revolution where the corrupt mafias should be hanged publicly without trials.
I am also seeing that..legally ap corrupt politicians.. corrupt Generals. Bias judges ka aik sath muqabla nahi kar saktay..they only remove by bloody revolution..
 
Sponsored Link