مبینہ فیک نیوز پر پیمرا کا "نیو نیوز" کو شوکازنوٹس،حماداظہر کا سخت ردعمل

fakeiii1i1.jpg


کچھ روز قبل نیو نیوز نامی نجی چینل نیوز نے دعویٰ کیا کہ پی ٹی آئی حکومت کا بڑا اسکینڈل بے نقاب ہوگیا جس پر پیمرا نے نجی ٹی چینل کو نوٹس جاری کرکے جواب طلب کرلیا

نجی چینل کے مطابق ایران سے LNG کے 5 جہاز سستے ریٹ پر منگوائے، قیمت عالمی مارکیٹ کی ظاہر کرکے 20 کروڑ ڈالر کی منی لانڈرنگ کرکےخزانے پر بڑا ڈاکہ مارا۔

چینل کے مطابق ایران سے تمام ثبوت ملنے کے باوجود حکومت نےکسی قسم کی کارروائی نہیں کی. ایران سے ایل این جی 180 ڈالر تک سستی ملتی ہے


ن لیگ کی حامی سمجھی جانیوالی صحافی بینش سلیم نے بھی ٹویٹ کیا اورلکھا کہ نیو نیوز لایا تحریک انصاف حکومت کا ایک اور میگا سکینڈل .. کیسے خلیجی ممالک کے نام پر ایرانی ایل پی جی منگوا کر اربوں روپے کی منی لانڈرنگ کی گئی ... ایمانداری کی قسمیں کھانے والے سب سے کرپٹ نکلے۔


اس پر وفاقی وزیر برائے پٹرولیم حماداظہر سامنے آگئے اور لکھا کہ تحقیق کے بغیر ٹویٹ کرنا اور الزام لگانا کتنا آسان ہے کچھ لوگوں کے لئیے۔

انہوں نے مزید لکھا کہ اس معاملے میں جن vessels کا ذکر ہوا ہے ان میں سے کسی کا بھی حکومت کی کمپنی سے تعلق نہیں۔


بعد ازاں پیمرا نے بھی اس معاملے کا نوٹس لے لیا اورنیونیوز کو شوکاز نوٹس جاری کردیا۔

شوکاز نوٹس کے مطابق ایل این جی کی خریداری اور مبینہ منی لانڈرنگ کے حوالے سے نیونیوز پر نشر کی گئی جھوٹی خبر پر پیمرا نے اظہاروجوہ کا نوٹس جاری کرتے ہوئے مذکورہ چینل سے 21 جنوری تک وضاحت طلب کرلی ہے۔


واضح رہے کہ اس سے قبل بھی مذکورہ چینل وزیراعظم عمران خان کی تنخواہ کے اضافے سے متعلق جھوٹی خبر پھیلاچکا ہے جس پر نہ صرف حکومت نے اس خبر کا نوٹس لیتے ہوئے اس خبر کو فیک قراردیا بلکہ پیمرا نے بھی اس پر چینل سے وضاحت مانگی تو مذکورہ چینل نے معافی مانگ لی۔

مذکورہ چینل نے دعویٰ کیا تھا کہ وزیراعظم عمران خان کی تنخواہ 2 لاکھ سے بڑھا کر آٹھ لاکھ کر دی گئی ہے۔

 
Advertisement
Sponsored Link